سعودی جارحیت کے باعث، یمن کی تیس لاکھ آبادی خوراک کی قلت کا شکار

ناصرشیرازی کی غیر قانونی گرفتاری، دوسرے ہفتے بھی پنجاب حکومت مخالف ملک گیر احتجاج

سعودی عرب تاریخی حقائق سے چشم پوشی کر رہا ہے: ایران

عراق میں داعش کا کام تمام، آخری شہر راوہ بھی آزاد

ایران کے زلزلہ زدگان کے لیے پاکستان کی امداد

پیغمبر اسلام (ص) کی اپنے اہلبیت (ع) سے محبت نیز اخلاق، نیکی اور مہربانی پر تاکید

دھرنا ختم نہ ہوا تو حکومت کو مجبوراً عدالتی حکم پرعمل کرنا ہوگا: احسن اقبال

تصاویر: کربلائے معلی میں شیعوں کا عظيم اجتماع

درگاہ لعل شہباز قلندر دھماکے کا مرکزی ملزم گرفتار

فرانس کے بیان پر ایران کا رد عمل

سعودی شاہ سلمان کا بیٹے کے حق میں تخت سے دستبرداری کا امکان

لبنانی عوام نے باہمی اتحاد سے سعودی عرب کی سازش کو ناکام بنادیا

سعودی مفتی کو تل ابیب آنے کی دعوت دی گئی

کیا امت مسلمہ اور عرب دنیا کے لئے اصل خطرہ ایران ہے ؟؟؟

تربت کے قریب 15 افراد کا قتل: دہشت گردی یا انسانی اسمگلنگ؟

سعودی شاہی خاندان کے اندرونی جھگڑوں کی داستان

’اسرائیل،سعودی عرب سے ایران سے متعلق انٹیلیجنس شیئرنگ کیلئے تیار‘

دھرنا مافیا کے سامنے وزیر قانون اور اسلام آباد ہائی کورٹ کی بے بسی

کائنات میں سرورکائنات اور سبط اکبر کا ماتم

سپریم کورٹ اقدام کرے یا جواب دے

سعودی عرب کی عرب لیگ میں لبنان کی رکنیت منسوخ کرانے کی مذموم کوشش

طاقت و اختیار کی جنگ میں پاکستان نشانے پر ہے

نیب کی اسحاق ڈار کا نام ای سی ایل میں شامل کرنے کی سفارش

آل سعود اپنی مخالفت برداشت نہیں کرسکتی

پاکستان:طالبان کی سرگرمیوں میں ایک بار پھر اضافہ

بین الاقوامی کانفرنس محبینِ اہلبیت علیہم السلام اور مسئلہ تکفیر

سعودی عرب کا یمن کے خلاف محاصرہ ختم کرنے کا اعلان

قطر سے فوجی تعاون جاری رکھیں گے، رجب طیب اردگان

پیغمبر اکرم (ص) کیوں مکارم اخلاق کے لیے مبعوث ہوئے تھے؟

علامہ راجہ ناصرعباس اور بلاول بھٹو زرداری کے درمیان ملاقات، ناصرشیرازی کے اغواکی پرزور مذمت

مسئلہ کشمیر ایٹمی جنگ کا پیش خیمہ

سعودی عرب نے لبنان کے وزير اعظم کو اغوا کررکھا ہے: لبنانی صدر

ایران و پاکستان

لبنان پر جنگ کے بادل

اسٹیبلشمنٹ کون

پہلی بار سعودی عرب میں عید میلاد النبی ؐکے موقع پر چھٹی ہوگی

امریکہ کا پاکستان سے ختم نبوت (ص) کے قانون کو منسوخ کرنے کا مطالبہ

مغربی میڈیا نہیں چاہتا کہ مسلمانوں کے اتحاد اور امن کو دیکھایا جائے

سعودیہ نے سعد الحریری کے بھائی کو ان کا جانشین مقرر کیا ہے

سعودیہ ایک لا متناہی اور اندھیرے ٹنل میں

جبری گمشدگی:پاکستان کو اصل حقائق بتانے چاہییں

طاقتور ترین سعودی شہزادے محمد بن سلمان کو عروج کیسے ملا؟

زمبابوے میں حکومت سے کشیدگی کے بعد فوج کی دارالحکومت کی طرف پیش قدمی

2040 تک یورپی یونین اور مغربی نظام کے خاتمے کا امکان

حکومتی وزراء کی د ہشت گرد لدھیانوی سے ملاقاتیں ،التماس سورۃ الفاتحہ برائے نیشنل ایکشن پلان

طاقت و اختیار کی جنگ میں پاکستان نشانے پر ہے

ایم ایم اے کی بحالی: کیا ملا الائنس ن لیگ کی جگہ لے پائے گا؟

سعد الحریری کی گرفتاری کے بارے میں نئے انکشافات

میانمارکی فوج نے روہنگیا مسلمان خواتین کو جنسی تشدد کا نشانہ بنایا

عرب لیگ نے لبنان کی رکنیت معطل کرنے کے سعودی مطالبے کو مسترد کر دیا

ایران-عراق سرحد پر 7.3 شدت کا زلزلہ، 415 افراد ہلاک

ایم کیوایم پاکستان رینجرز ہیڈ کوارٹرز میں بنتی تو ان پر مقدمات نہ چلتے، ڈی جی رینجرز

لبنان کے وزیراعظم کا استعفیٰ، سعودی عرب مطلوبہ نتائج حاصل نہیں کرسکا

کیا رائے کی آزادی فساد کی راہ ہے

جوہری ہتھیار دہشت گردوں کے ہاتھ لگنے کا خطرہ بڑھ گیا: پوپ فرانسس

طرابلس میں سعودی عرب کے ڈکٹیٹر ولیعہد محمد بن سلمان کی تصویریں نذر آتش

نواز شریف نے پاکستانی معیشت کو تباہ کردیا

امریکہ کی تو سیع پسندانہ خارجہ پالیسی اور دنیا بھر کے مہاجرین

یہ اسٹیبلشمنٹ کون ہے!

دیوبندی مدارس اور انتہا پسندی

سعودی طرز کی مہمان نوازی؛ ایسی دعوت جس کا انجام گرفتاری تھا

عراق ایران سرحد پر7.3 شدت کا زلزلہ، 133 افراد ہلاک

حدیبیہ پیپرز ملز ریفرنس: شریف خاندان کے ایک اور امتحان کا آغاز

امریکہ، افغانستان میں داعش کو مضبوط کر رہا ہے۔ حامد کرزئی

فلسطینی مقصد اربعین حسینی میں

میانمارمیں روہنگیامسلمانوں کی کوریج پر ترک چینل کے صحافیوں کو سزاسنا دی گئی

بلوچستان تنازعہ : ذرائع ابلاغ ہدف کیوں؟

بھارتی مبلغ ڈاکٹر ذاکر نائیک کے گرد گھیرا تنگ

سعودی عرب کے موجودہ حالات، مذہبی طبقہ اور پاکستان

سعودی احتساب کھوہ کھاتے ،گرفتارشہزادوں سمیت 7 اعلی عہدیداروں کو رہا کرنے کا فیصلہ۔

لبنانی حکومت سے اعلان جنگ کرنے والی حکومت کے طور پر نمٹنے کا عندیہ

2017-02-13 07:28:22

سعودی جارحیت کے باعث، یمن کی تیس لاکھ آبادی خوراک کی قلت کا شکار

 

Yemen

 

اقوام متحدہ کے تین اداروں کے مشترکہ جائزے کے مطابق یمن کی کل آبادی کا ایک تہائی سے زیادہ حصہ اس وقت خوراک کے حصول کی جدوجہد میں مصروف ہے۔

 

یمن میں خوراک اور زراعت کے ادارے کے نمائندے صالح حج حسان نے خوراک میں کمی کا شکار اور تیزی سے بگڑتی صورتحال پر تشویش کا اظہار کیا۔

 

واضح رہے کہ آل یہود کی حمایت سے آل سعود کی یمن پر مسلط کردہ جنگ کو 684 دن کا عرصہ گزر گیا ہے اور حملے بدستور جاری ہیں۔

 

انسانی حقوق کی عالمی تنظیموں نے اپنی تازہ ترین رپورٹ میں کہا ہے کہ یمن میں آل سعود کے وحشیانہ حملوں میں 11929 نہتے شہری من جملہ 4398 بچے اور خواتین شہید اور بچوں اور خواتین سمیت 19885 افراد شدید زخمی ہوچکے ہیں۔

 

زخمی ہونے والوں میں 4227 بچے اور خواتین بتائے جارہے ہیں۔

 

سعودی اتحادی فوج کے حملوں میں یمن کے بنیادی ڈھانچے تباہ کردیے گئے ہیں، حملوں میں 15 ایئرپورٹ، 4بندرگاہیں، 274 پانی کے ذخائر، 159 بجلی کے پاور پلانٹ اور کھمبے،267 مختلف قسم کے مصنوعات کے کارخانے، 308 ایندھن کے مراکز، 323 آئل ٹینکر وغیر تباہ کردئے گئے ہیں۔

 

آل سعود کے جنگی طیاروں نے یمن کے 5457 تجارتی مراکز، 653 خوراکی مواد کے ذخائر، کھانے کی اشیا ترسیل کرنے والے 500 بڑے ٹرک، 528 شاپنگ مالز، 196 پولٹری فارم، 2497 عام شہریوں کی گاڑیاں، 1508 کھیت کو نشانہ بنا کر تباہ کردیا ہے۔

 

رپورٹ کے مطابق سعودی حملوں میں 319 ٹیلی کمیونیکیشن نیٹ ورکس کے مراکز، 1489 پل اور سڑکیں، 1595 حکومتی ادارے، 269 ہسپتال، 111 کالج اور یونیورسٹیوں کی عمارتیں اور 751 مدارس، 101 اسٹیڈیم اور کھیلوں کے مراکز، 25 ذرائع ابلاغ کے دفاتر اور دیگر اداروں کو نابود کردیا گیا ہے۔

 

آل یہود اور آل سعود کے حملوں میں 401831 یمنی شہریوں کے مکانات کلی طور پر منہدم کردیے گئے ہیں۔

 

سعودی اتحاد کے نام نہاد مسلمان فوج نے یمن کی 705 مساجد کو بھی شہید کردیا ہے۔

زمرہ جات:  
دیگر ایجنسیوں سے (آراس‌اس ریدر)

یادوں کے جھروکے

- سحر نیوز

گلوبل وارمنگ اور امریکا

- ایکسپریس نیوز

امریکی بھارتی خطرناک عزائم

- مجلس وحدت المسلمین