What should we do? – by Aamir Hussaini

نقیب اللہ قتل کیس؛ راؤ انوار ماورائے عدالت قتل کے ذمہ دار قرار

امریکا اور فرانس کا ایران سے کڑی شرائط پر نئے جوہری معاہدے پر اتفاق

پیپلز پارٹی کے رہنما ندیم افضل چن تحریک انصاف میں شامل ہوگئے

جوہری معاہدے کی پاسداری ضروری ہے، موگرینی

خواتین معاشرے کا طاقتور حصہ ہیں لیکن انہیں کمزور بنا کر پیش کیا جاتا ہے

قومی مستقبل کا سوال ہے بابا! نذر حافی

داعش کو سر اٹھانے کی اجازت نہیں دی جائے گی: عراق

قطر کو شام میں امریکی فوجی موجودگی کے اخراجات ادا کرنے چاہییں

دنیا کو بالادستی کے فریب کے چنگل سے نکلنا ہو گا، ایرانی وزیر خارجہ

جوہری معاہدے کو ضرر پہنچا تو بھیانک نتائج آپ کے منتظر ہیں، ایرانی صدرکا امریکہ کو انتباہ

احسن اقبال کی چیف جسٹس کو للکار: کیا اداروں کا تصادم لازم ہے؟

جوڈیشل مارشل لا کے سائے

پاکستان روس کے ساتھ فوجی روابط بڑھانا چاہتا ہے: پاکستان آرمی

پاکستانی نوجوان کو گاڑی سے کچلنے والا امریکی سفارت کار بلیک لسٹ

یمن کی کسی کو پرواہ نہیں ہے – عامر حسینی

وزیراعظم بیرون ملک مفرور ملزم سے ملتے ہیں شاید انہیں قانون کا پتہ نہیں، چیف جسٹس

ایران سے جنگ کرکے امریکا کو کچھ حاصل نہیں ہوگا، فرانسیسی صدر

ن لیگ کی شیعہ دشمنی، دہشتگردوں کو سرکاری پروٹوکول، شیعہ رہنماوں کی سیکورٹی واپس

فیس بک نے داعش اور القاعدہ کی 19 لاکھ پوسٹیں ڈیلیٹ کردیں

شامی افواج کا دمشق میں امام علی(ع) مسجد پر قبضہ

شبعان المعظم عبادت و بندگی اور پیغمبر اسلام کا مہینہ

پاکستان کا کرنل جوزف کو امریکہ کے حوالے کرنے سے انکار

این آراو سے متعلق درخواست پر پرویز مشرف اور آصف زرداری کو نوٹس جاری

ایران سے جنگ امریکا کے لیے کتنی نقصان دہ ہو گی؟

تمام اہل بہشت ہمیشہ کیلئے امام حسین(ع) کے مہمان ہیں

مارشل لاء میں بھی اتنی پابندیاں نہیں لگیں جتنی اب ہیں، نواز شریف

بار بار اسمارٹ فون دیکھنے کی لت نشے کی مانند ہے: ماہرین

خون کی رگوں کو جوان کرنے والا نایاب اینٹی آکسیڈنٹ دریافت

تاحیات نااہلی اور نوازشریف

نقیب قتل کیس؛ پولیس نے راؤ انوار کو مرکزی ملزم قرار دے دیا

کے پی کے حکومت میں رخنہ: کیا پی ٹی آئی جماعت اسلامی کے بغیر اپنا وجود برقرار رکھ سکتی ہے؟

سعودیہ میں تبدیلی کے پیچھے کون؟

شام میں مشترکہ عرب فوج تشکیل دینے پر مبنی امریکی منصوبہ

موجودہ حالات میں الیکشن ہوتے نظر نہیں آرہے، چوہدری شجاعت حسین

کوئٹہ میں ملک دشمن تکفیری دہشت گردوں کی فائرنگ، 2 شیعہ ہزارہ شہید 1 زخمی

فاروق ستار کی لوڈ شیڈنگ ختم نہ ہونے پر وزیر اعلیٰ ہاؤس کے گھیراؤ کی دھمکی

مغرب کیمیائی حملے کے شواہد تبدیل کر رہا ہے: روس

6 ماہ میں مختلف بیماریوں میں 2 ہزار یمنی شہریوں کا جانی نقصان

نظام تعلیم کا بیڑا غرق کردیا یہ ہے پنجاب حکومت کی کارکردگی، چیف جسٹس

ضیاالحق سے ڈکٹیشن لیتے وقت نواز شریف کو ووٹ کی عزت یاد نہیں آئی، بلاول بھٹو زرداری

مجھے دکھ ہے کہ بے گناہی ثابت کرنے کے لئے 14 ماہ زندان میں گزارے، ثمر عباس – از فواد حسن

ریاض میں شاہی محل کے قریب ‘کھلونا ڈروان’ مارگرایا

ہم آزادی سے خائف ہیں؟

’پاکستان سے زیارت کرنے جاؤ تو واپسی پر ایجنسیاں اٹھا لیتی ہیں‘، بی بی سی رپورٹ

اسلامی مزاحمت کے میزائل اسرائیل کے اندر ہر ہدف کو نشانہ بنا سکتے ہیں

حضرت عابد (ع) کی ولادت مبارک ہو!

مانچسٹر میں سالانہ سیمینار: 'برطانیہ میں مسلمانوں کو درپیش چیلینجز'

حضرت عباس(ع) کی زندگی انتظار کا عملی نمونہ

حضرت ابوالفضل (ع) کے باب الحوائج ہونے کا راز

شاعر مشرق علامہ محمد اقبال کا80 واں یوم وفات

فلسطینی بچوں پر اسرائیلی فوج کی فائرنگ شرمناک ہے، اقوام متحدہ

اعیاد شعبانیہ اور جشن سرکار وفا

شمالی کوریا کا مزید ایٹمی اور میزائل تجربات نہ کرنے کا اعلان

شام کو اینٹی ایئر کرافٹ میزائل فراہم کرنا اخلاقی ذمہ داری

پاکستان کا کشمیر سے متعلق امام خامنہ ای کے بیان کا خیر مقدم

ان الحسین باب من ابواب الجنة

ہم تب کربلائی اور حسینی ؑنہضت کا حصہ بن سکتے ہیں جب ہمارے اندر انبیائی اور حسینیؑ صفات موجود ہوں: علامہ راجہ ناصر عباس

صحافت اور شہادت ساتھ ساتھ

چیئرمین سینیٹ منتخب کرانے کیلیے پی ٹی آئی نے کہا کہ اوپر سے آرڈر آیا ہے: سراج الحق

ایران کا ردعمل امریکہ کیلئے تکلیف دہ ہوگا: محمد جواد ظریف

امریکا کی عالمی جوہری ڈیل سے ممکنہ دستبرداری اور اس کے اثرات

امام حسین علیہ السلام کی سیرت طیبہ

مسلم خاتون کو ہاتھ نہ ملانے کی وجہ سے فرانس کی شہریت سے محروم کر دیا گیا

اللہ تعالی کی طرف سے حضرت امام حسین علیہ السلام کی ولادت کے موقع پر تہنیت اور تعزیت

سعودی عرب میں چیک پوسٹ پر فائرنگ سے 4 سیکویرٹی اہلکار جاں بحق

امریکی ہتھیاروں پر انحصار میں کمی: کیا پاکستان امریکہ سے مستقل چھٹکارا پا رہا ہے؟

سائیکل چلانے سے بہتر کوئی ورزش نہیں

کیمائی گیس حملہ کا فسانہ – رابرٹ فسک

شام پر ناکام حملہ، ٹرمپ کی مشکلات میں اضافہ

سعودی حکومت کے بانی کے برطانوی ایجنٹ ہونے کی تصدیق

2017-03-19 00:22:59

What should we do? – by Aamir Hussaini

17265089_10212653825288918_8951025932217569580_nPresident of Ahle Sunnat Waljamat Aurangzaib farooqi was released on 15 March,2017 on order of Anti Terrorist Court Rawalpindi from Adiyala Jail. He had requested ATC Ralwapindi to accept his post arrest plea bail on June 24,2015 in a case of delivering hate speech during a Friday sermon in a Wah Cantt. This request of post bail plea was accepted according to Judge of ATC Rawalpindi due to weak evidences against accused Aurangzaib farooqi.

Aurangzaib Farooqi is head of a banned sectarian organization #ASWJ cover name of #SSP which is also banned and terrorist organization declared by Pakistani Government. His name is included in Fourth Schedule List so he can not make speech in public. According to law a person in Fourth Schedule list can not go out of his city without permission of local administration and this is unlawful for such person to make speeches and lead processions and rallies.

But in case of Aurangzaib farooqi , Muhammad Ahmad Ludhiyanvi or other leadership of banned ASWJ (mostly names of its leadership from top to bottom are in Fourth Schedule list) we see no law implementing on them.

On March 15,2017 Aurangzaib farooqi released from Adiyala Jail Rawalpindi and on 17 March,2017 he came in Central Deobandi Mosque of Havelian of Abbottabad district of KPK where he delivered Friday sermon and offered Friday prayer. During his speech he again told the people present in mosque that he would contest for National Assembly from NA 18.

Head of a banned organization, a name included in fourth schedule is visiting many cities all over the country,making speeches,running pre-election campaign but we see that neither federal government nor any provincial government is serious in implementing law and any local administration is not ready to take action against Aurangzaib farooqi on violation of law and breaking ban on his organization.

What examples are being set by our state when we see that every violent, Takfiri, extremist, sectarian, hatemonger, banned religious cleric (Majority are from Takfiri Deobandi faction of Deobandi school of thought ) is free to spread hatred messages, instigating his followers to wage violence and terror against other sect and religions. He always gets clean chit or bail from court due to insufficient evidences. In most cases he freely led a rally or public meeting under banner of banned organization, get prominent coverage in mainstream media and law never comes in action against such hatred clerics. Aurangzaib faroqi is not only one example we see Mullah Abdulaziz, Muhammad Ahmad Ludhiyanvi, Mufi Naeem, Khadim Hussain Rizvi, Irfan Mashahdi, Qari Rubnawaz Hanafi , Masroor Jhangvi ( now he is Parliamentary leader of JUI-f ), Taj Hanafi and dozens of other hatemonger Mullah roaming free and delivering hate speeches in Public.

We can find such hate speeches on social media, in adieu and video format in markets, published literature is also easily available, working offices of banned organizations all over the country, even running seminaries and schools by these banned outfits but our interior ministries including federal and provincials, local administrations and persecution departments could not find solid evidences against them so they are roaming free.

National Action Plan which was devised for Takfiris and Jihadis now is using just to suppress Sindhi,Baloch,Pashtuns, Saraikis,Urdu speaking, Gilgiti-Balti, Kashmiri political and social activists. Even There is an un-written article included in NAP which is false balancing actions. If you arrest four Takfiri Deobandis then you pick up four Shia,Sunni Barelvi also to create a balance. Aurangzaib farooqi and other many Takfiri Deobandi clerics were released by our courts in cases of violating Amplifier act but hundreds of moderate deobandis,Ahlehadith, Sunni Barelvi and Shia clerics paid heavi fines and in some cases imprisonment in same cases registered against them. You can not hold cultural events, you can not commemorate Urs,Mourning cermonies of Ahle-i-bait and Sahaba ,you can not celebrate spring arrival but Takfiri Mullahs are allowed to do what they want, this is National action plan in Pakistan.

Peaceful young men and women are asking me what should be done in such conditions because neither administrations from top to bottom are ready to stop extremism, Takfirism, Jihadism , hatemongering culture from society and nor we are seeing courts able to block such practices so we have only one way that is non-violent, peaceful but strong efforts to build a great social movement against extremism in Pakistan.

We need to start building of such networks of human rights defenders in every twin and village which reject all types of hate mongering and spreading of violence and that exert powerful mass pressure on state to take real step to curb all such menace.

 

 

زمرہ جات:  
دیگر ایجنسیوں سے (آراس‌اس ریدر)