ISIS weapons
ایک امریکی اہلکار نے انکشاف کیا ہے کہ سعودی عرب دہشت گرد تنظیم داعش کے لئے امریکہ سے اسلحہ خرید رہا ہے۔ حال ہی میں امریکہ اور سعودی عرب کے درمیان طے پانے والے معاہدے کے تحت سعودی عرب، امریکہ سے ایک سو دس ارب ڈالر مالیت کا اسلحہ خرید رہا ہے۔
 

غیر ملکی ذرائع کے مطابق امریکی بحریہ کے ایک سابق اہلکار کین او کیف کا کہنا ہے کہ سعودی عرب، امریکہ سے داعش کے لئے ہتھیار خرید رہا ہے۔ امریکہ کی جانب سے ایک سو دس ارب ڈالر کا جو ہتھیار ملے گا آخر کار وہ داعش کو ہی پہنچے گا۔ ان کا کہنا ہے کہ داعش صہیونی حکومت، آل سعود اور امریکہ کا پروردہ ہے۔
کین او کیف کا مزید کہنا ہے کہ امریکہ کی منفی اور متعصب پالیسیاں اس وقت دنیا میں لاکھوں انسانوں کی ہلاکت کا باعث بن رہی ہے جبکہ وہ ایران پر مشرق وسطی میں دہشت گردی کے کھوکھلے اور مضحکہ خیز الزامات لگا رہا ہے۔ امریکی بحریہ کے سابق اہلکار کا کہنا ہے کہ امریکہ کی غلط پالیسیوں کی وجہ سے دہشت گردی میں اضافہ ہو رہا ہے۔
واضح رہے کہ سعودی عرب اور امریکہ نے تین سو اسی عرب ڈالر کی مالیت کے معاہدے پر دستخط کئے ہیں۔ اس معاہدے کے تحت امریکہ، سعودی عرب کو ایک سو دس ارب ڈالر کی مالیت کا اسلحہ بھی دے گا۔