عراق میں نئی خانہ جنگی کیلئےایک اورہولناک منحوس منصوبہ

عرب لیگ کی بیت المقدس میں امریکی سفارتخانہ کھولنے کے اعلان کی مذمت

میانمار کی فوج روہنگیا مسلمانوں کی بستیوں کو مسمار کررہی ہے

پنجاب بیوروکریسی کی بغاوت کے پیچھے حکومت ہے، اعتزاز احسن

افغان فورسز میں دہشت گردوں کوشکست دینے کی صلاحیت نہیں،ڈی جی آئی ایس پی آر

امریکہ داعش کو عراق اور شام سے دوسری جگہ منتقل کررہا ہے

کرپشن فری پاکستان کی جدوجہد میں عدلیہ کےجرائت مندانہ اقدامات کی حمایت کرتے ہیں، علامہ راجہ ناصر عباس

سعودی عرب فوج بھیجنے کا فیصلہ، آئین اور ایوان کیا کہتے ہیں

ایمنسٹی انٹرنیشنل: بن سلمان کی جانب سے اصلاحات کا پرچم بلند کرنا مخالفین کو کچلنے کیلئے ہے

شام میں فائربندی کا مغربی منصوبہ جنگ کو طول دینا ہے: امریکی صحافی

میونخ سکیورٹی کانفرنس اور اسرائیلی سرکس

دہشت گردی سے لڑنے والا ملک دہشت گردوں کا ہی ہمدرد کیوں؟

سعودی حکام کا ملک میں مغربی ثقافت کو فروغ دینے پر اربوں ڈالر خرچ کرنے کا منصوبہ

ہوسکتا ہے اب مجھے الیکشن بھی نہ لڑنے دیا جائے، نوازشریف

پاکستان میں پہلی بار اوپن ہارٹ سرجری کے بغیر دل کے والو کی تبدیلی کا کامیاب آپریشن

امریکا ایٹمی معاہدے کو سبو تاژ کرنا چاہتاہے، ایران

پاکستان دہشت گردوں کے مالی معاون ممالک کی فہرست میں شامل نہیں

عدالت کی سیاست کیا رنگ لا سکتی ہے

سینیٹ الیکشن کے بعد قومی اسمبلی توڑے جانے کا امکان

ایران جوہری معاہدے کی پاسداری کررہا ہے: آئی اے ای اے

ملک میں تعلیم کی بہتری کے لئے سب کچھ کریں گے، آرمی چیف

چوہدری نثار صاحب! حقائق سامنے لائیے

سعودی عرب میں مخالفین پر دباؤ ڈالنے کا نیا طریقہ

سعودی مسلح افواج کا ساز و سامان اور تربیت

کے پی کے حکومت کا مدرسہ حقانیہ کیلیے مزید 27 کروڑ 70 لاکھ جاری کرنے کا فیصلہ

سعودی عرب، چین اور ترکی نے پاکستان کے خلاف امریکی قرارداد ناکام بنادی

کرگل میں جگر گوشہ رسول کا ماتم، عظیم الشان جلوس کی تصاویر

سعودیوں کا ایران کے خلاف ایک نیا دعویٰ

پاکستان اور چین نے ہمارے خلاف پراکسی وار چھیڑی ہوئی ہے: بھارتی آرمی چیف

نواز شریف نے فوج سے بچنے کے لئے مودی سے خفیہ ملاقات کی، عمران خان

(ن) لیگ سینیٹ الیکشن سے آؤٹ، الیکشن کمیشن نے امیدواروں کو آزاد قرار دیدیا

پاکستان کے لبرل انگریزی پریس میں کمرشل ازم کا بڑھتا رجحان – عامر حسینی

ایران ہر اس تنظیم کی حمایت کرے گا جو دہشت گردوں کے خلاف جنگ کرے گی

نواز شریف پر سپریم کورٹ کا ایک اور وار

چیف جسٹس کا تبصرہ پسپائی کا اشارہ ہے یا مقابلے کا اعلان؟

سپریم کورٹ کا فیصلہ انصاف کے تقاضوں کے منافی ہے، ترجمان مسلم لیگ (ن)

نواز شریف، ن لیگ کی صدارت سے فارغ، فیصلے نے کئی سوالات اٹھادیئے

پاکستانی فوج سعودی عرب بھیجنے کے فیصلے کی مخالفت

نواز شریف پارٹی صدارت سے بھی نااہل، سپریم کورٹ کا فیصلہ

تصاویر: مراجع عظام کا حضرت معصومہ (س) کے حرم کی طرف پیدل مارچ

ترکی میں بچوں سے زیادتی کے ملزمان کی جنسی صلاحیت ختم کرنے پر غور

شام میں بچوں کی ہلاکتوں پر الفاظ ختم، یونیسیف نے خالی اعلامیہ جاری کردیا

پاکستان کو دہشت گردی کی واچ لسٹ میں شامل کرنے کی امریکی کوشش ناکام

عدالت نے اقامہ پر نااہل کرکے نواز شریف کو سڑکوں پر نکلنے کا موقع دے دیا، عمران خان

امریکہ کی شام میں موجودگی عالمی قوانین کی خلاف ورزی ہے؛ سرگئی لاوروف

ڈونلڈ ٹرمپ امریکی تاریخ کے بدترین صدر قرار

پاکستانی فوج سعودی عرب بھیجے جانے کی مخالفت

شاہ سلمان اپنے بیٹے کی پالیسیوں پر غصہ ہیں؛ رای الیوم

پارلیمنٹ بمقابلہ عدلیہ: تصادم سے کیا برآمد ہوگا

پارلیمنٹ آئین سے متصادم قانون نہیں بنا سکتی، چیف جسٹس پاکستان

انتخابات اور قومی تعلیم و تربیت

تصاویر: امریکہ میں ہتھیار رکھنے کے خلاف مظاہرہ

جس سے فاطمہ (س) ناراض ہوں اس سے اللہ تعالی ناراض ہوتا ہے

پارلیمنٹ کو عدلیہ کے خلاف استعمال کیا گیا تو سڑکوں پر نکلیں گے، عمران خان

رسول خدا کی بیٹی کی شہادت کا سوگ

سی پیک کے تحفظ کیلئے چین اور بلوچ علیحدگی پسندوں میں خفیہ مذاکرات کا انکشاف

تمام عالم میں جگر گوشہ رسول کا ماتم

مسجد الحرام میں تاش کھیلنے والی خواتین کی تصاویر سوشل میڈیا پر وائرل

پاکستانی سکولوں میں چینی زبان لازمی، سینیٹ میں قرارداد منظور

خود کشی کی کوشش جرم نہیں بیماری، سینیٹ میں سزا ختم کرنے کا ترمیمی بل منظور

امریکہ شام میں آگ سے نہ کھیلے : روس

کیا فدک حضرت زہرا (س) کے موقوفات میں سے تھا یا نہیں؟

لعل شہباز قلندر کے مزار پہ بم دھماکے میں تکفیری دیوبندی خطیب لال مسجد کے رشتے دار ملوث ہیں – سندھ پولیس/ رپورٹ بی بی سی اردو

اسرائیل کے ناقابل شکست ہونے کا افسانہ ختم ہو چکا ہے

 فرانسیسی زبان میں حضرت زهرا (س) کے لیے مرثیه‌ خوانی 

سعودی عرب کو شرک اورکفر کے فتوے نہ دینے کا مشورہ

ایرانی طیارے کے حادثے پر پاکستان کی تعزیت

سعودی عرب میں غیر ملکی خاتون سے اجتماعی زیادتی

کوئی ملک پاکستان کو دہشت گردی کی بنا پر واچ لسٹ میں نہیں ڈال سکتا، احسن اقبال

بلوچ ـ مذہبی شدت پسندی – ذوالفقار علی ذوالفی

تصاویر: شام میں ترکی کے حمایت یافتہ افراد کی کردوں کے خلاف جنگ

2017-08-13 08:52:42

عراق میں نئی خانہ جنگی کیلئےایک اورہولناک منحوس منصوبہ

iraq

آغا سید عباس حسینی۔۔

عراق میں امن و سکون کے غارتگر اب اس جنگ کو ایک نئی حکمت عملی کے تحت شیعہ علاقوں میں لے جانے کے منصوبے پر بری مستعدی سے کاربند ہیں۔ بعض ذرائع کے مطابق بعثی لیڈرز اور متشدد وہابی گروہوں(القاعدہ، داعش)کے درمیان مختلف نکات پر اتفاق ہو چکا ہے۔

عراقی حکومت کے حصول کے علاوہ شیعوں کی مخالفت پر یہ سب گروہ آپس میں متفق ہیں۔ تفصیلات کے مطابق اس معرکے کے لیے دو سال سے تیاری جاری ہے۔ اور اس معرکے کے تحت جنگ کو عراق کے وسطی اور جنوبی علاقے تک لے جانا مقصودہے۔ اسے “معرکہ کبری” کا نام دیا جائے گا اور اس کے دو مرحلے ہوں گے۔

پہلے مرحلے کو “صرخة الحق” اور دوسرے کو “صرخة الامام ” کا نام دیا گیا ہے۔ بڑی بڑی عراقی قیادت اس وقت سعودی عرب، قطر اور ترکی کے دورے کر رہی ہیں اور یہ رہنما ان ممالک سے غیر محدود امداد وصول کر رہے ہیں۔

حالیہ دنوں میں شیعہ اکثریتی علاقوں میں جو مظاہرے اور احتجاجات دکھائی دئیے وہ کسی خاص مطالبے کی خاطر نہیں تھے، بلکہ طے شدہ منصوبے کا تحرک تھا۔ یہ انہی حالات کے مشابہ ہے جب داعش کے قبضے سے پہلے بڑی سطح پر مظاہرے ہوئے تھے جو عراق کے ایک تہائی علاقوں تک پھیل گئے تھے۔ لیکن طریقہ کار مختلف تھا۔ اب یہ متوقع مظاہرے وسطی اور جنوبی علاقوں تک محدود رہیں گے۔ مقصد لوگوں کو موجودہ حکومت سے متنفر کرنا ہے تاکہ دھرنوں تک کی نوبت آئے اور پھر حالات خرابی کی طرف نکلیں۔ اس مرحلے کو معرکہ کبری کا نام دیا گیا ہے۔

ساتھ ہی وزارت دفاع سے منسلک مختلف عناصر کی علیحدگی شروع ہوگی۔جو منصوبہ بنایا گیا ہے اس میں بنیادی نکتہ یہ ہے کہ داعش کو اس کے تمام عناصر(عربی، عراقی، اجنبی)وادی حوران میں منتقل کیا جائے گا ، اور پھر جنگ کو عراق کے وسطی اور جنوبی علاقوں میں منتقل کیا جائے گا۔ مظاہروں اور دھرنوں کے بعد اگلے مرحلے میں حالات کو اچانک خراب کیا جائے گا۔ ایک ساتھ چار مختلف صوبوں میں جنگ چھڑ جائے گی۔

منصوبے کے تحت داعش نخیب اور بابل کے شمالی علاقے سے حلہ اور کربلا میں داخل ہوگی ۔ جبکہ عراقی وزارت دفاع فورا بغداد کی سیکیورٹی کی ذمہ داری خود لے گی اور پھر بڑی آسانی کے ساتھ بغیر جنگ کے بغداد کو ان کے حوالے کیا جائے گا۔ اس کے علاوہ خفیہ پلان بھی موجود ہے جس کے بارے میں فی الحال کچھ نہیں کہہ سکتے۔
علاوہ ازیں اس بات کا قوی امکان ہے آنے والے دنوں میں داعش کا نام تبدیل کر دیا جائے ۔ ترکی سے مختلف خفیہ راستوں سے متعدد علاقوں میں اسلحے کی منتقلی جاری ہے جن میں اسمگلنک کے سمندری راستے بھی شامل ہیں۔ جبکہ اطلاعات یہ آ رہی ہیں کہ ترکی میں مختلف ٹریننگ سنٹرز ہیں جہاں سے منحرف جماعتوں کو جن میں “صرخیہ” “یمانیہ” اور “جند السما” جیسی تنظیمیں شامل ہیں ، کو ٹریننگ دینے کے بعد جنوبی علاقوں میں منتقل کیا جا رہا ہے۔ ان کا ہدف دینی اور سیاسی قیادت کو ٹارگٹ کرنا، مظاہرات اور احتجاجات کے ذریعے سڑکوں کو مشغول ر کھ کر اپنے اہداف کا حصول ہے۔

اطلاعات کے مطابق جو عراقی رہنما اس مںصوبے کو کودیکھ رہے ہیں۔ جنرل زیاد عجلی، جن کو زیاد موسوی بھی کہا جاتا ہے۔ 1980 کی دھائی میں پہلے بصرہ میں اور پھر عمارہ میں سیکیورٹی آفیسر تھے۔ان علاقوں میں اس کے وسیع تعلقات ہیں۔محمد رجب حدوشی۔ حسین کامل کا معاون ہے اور اس کے بعد دوسرے درجے کا اہم شخص ہے۔ احمد رشید,جنرل فاضل حیالی, ابو محمد عربی جس کا تعلق قطر ی ایجنسی سے ہے۔۔ جنرل عیال۔ صدام کے دور کا سابق آفیسراور اس کا گارڈ، سعودی عرب اور ترکی کے چند دیگر بڑے عہدیدار شامل ہیں۔

اس منصوبہ میں ہے کہ جنوہ، تل ابیض، درنہ، یلوہ، اسبارکہ کے علاقوں میں دہشت گردی کے کیمپ بنانا۔حملے والے دن

کو “صرخ الحقة یعنی حق کی چیخ کا نام دیا گیا ہے۔ منصوبے میں بصرہ اور ناصریہ کے علاقے کو ٹارگٹ کیا جائے گا۔ مبصرین کے مطابق عراق کے مستقبل کے حوالے سے ایک بار پھر انتہائی خطرناک کھیل کھیلا جا رہا جو ایک بار عراق میں طویل خانہ جنگی کا باعث بن سکتا ہے۔

زمرہ جات:  
دیگر ایجنسیوں سے (آراس‌اس ریدر)