شیعہ عزاداری امام حسین کے صدقے میں زندہ ہیں

افغانستان: پولیس ٹریننگ سینٹر پر حملہ،32 ہلاک 200 زخمی

عراق: مخمور سے بھی پیشمرگہ کی پسپائی

ایٹمی جنگ کسی بھی وقت چھڑ سکتی ہے

آئندہ انتخابات جیتنے کے بعد ملک کے تمام ادارے ٹھیک کریں گے: عمران خان

نیوز ون چینل کے مالک کے داعش سے مراسم، خطرناک انکشاف

انڈیا میں سبھی مذاہب کے لیے یکساں قانون کے نفاذ کا راستہ ہموار

مشرق وسطیٰ کو «سی آئی اے» کے حوالے کرنا، ٹرمپ کی اسٹرٹیجک غلطی

حضرت زینب (س) کس ملک میں دفن ہیں؟

ایران جوہری معاہدہ، امریکہ اپنے وعدوں پر عمل کرے: یورپی یونین کا مطالبہ

امام سجاد(ع) کا طرز زندگی انسان سازی کیلئے بہترین نمونہ ہے

پاک-ایران گوادر اجلاس؛ دہشتگردوں کی نقل و حرکت کے خلاف موثر کارروائی کا فیصلہ

فوج کے نئے مستعد وکیل

امام زین العابدین علیہ السلام کے یوم شہادت پر عالم اسلام سوگوار

علامہ ناصر عباس جعفری کا کرم ایجنسی دھماکےاور پاک فوج کے جوانوں کی شہادت پر اظہار افسوس

’’باوردی سیاستدانوں‘‘ کے ہوتے جمہوریت محفوظ نہیں

نواز شریف کا کیپٹن صفدر کی احمدی مخالف تقریر سے لاتعلقی کا اظہار

عمران خان کا 26 اکتوبر کو الیکشن کمیشن میں رضاکارانہ پیش ہونے کا فیصلہ

ایران کی دفاعی حکمت عملی میں ایٹمی ہتھیاروں کی کوئی جگہ نہیں

سعودی کارندوں کی آپس میں جنوبی یمن میں جنگ

پانچ مغویان کی بازیابی پاک امریکہ تعلقات کشیدگی کے خاتمے میں مثبت پیشرفت

دس سال جدائی کے بعد فلسطینی گروہ متحد

کے پی کے۔۔۔پی ٹی آئی ناکام ہوئی یا جمہوریت

یمن میں ہیضہ کی بیماری میں جاں بحق ہونے والوں کی تعداد 2156 ہو گئی

امریکہ کسی بھی معاہدے کی پابندی نہیں کرتا: ڈاکٹر لاریجانی

امام زین العابدین علیہ السلام کی شہادت کے غم میں فضا سوگوار

ترکی نے عراقی کردستان کے ساتھ اقتصادی تعاون ختم کردیا

ٹرمپ کے اقدامات پوری دنیا کے لیے خطرے کا باعث بن سکتے ہیں: ہلیری کلنٹن

مقتدیٰ صدر کا کردستان کے ریفرنڈم کے نتائج کو باطل کرنے کا مطالبہ

خواتین کےخلاف وہابیت کے مظالم کا ماجرا

آئی ایم ایف نے ایران مخالف امریکی مطالبہ مسترد کردیا

سینٹرل افریقہ میں مسلمانوں کا قتل عام

میں نہیں سمجھتا نواز شریف پھر وزیراعظم بن سکیں گے: خورشید شاہ

آج پاکستان مقروض ہوچکا اور کوئی پوچھنے والا نہیں: عمران خان

برطانیہ، آذربائجان کے فوجی معاملات میں داخل ہونے جارہا ہے

عرب ممالک کے ساتھ اسرائیل کے فوجی اور انٹیلی جنس رابطے

طويريج کون ھیں، انکا کربلا کے سفر کا آغاز کب ھوا ؟

حافظ سعید کی نظر بندی: کیا پاکستان بین الاقوامی دباؤ کو نظر انداز کر دے گا؟

سی پیک، کئی ممالک کے مفادات کی جنگ

صدر ٹرمپ دنیا میں امریکہ اور امریکی عوام کی آبروریزی کررہے ہیں

شام کا شہر المیادین، داعش کے قبضے سے آزاد

ہم لبنان کو امریکہ اور اسرائیل کے ہاتھوں کا کھلونا بننےکی اجازت نہیں دیں گے

کیا روس نے مشرق وسطیٰ میں امریکہ کی جگہ لے لی ہے ؟

’ڈو مور‘ پر کا قضیہ

معیشت ، سیاست اور فوج

حقیقی منتظر، امام (ع) کی دوری پر پریشان ہوتا ہے

کیا ملت جعفریہ کے گمشدہ افراداحسان اللہ احسان سے بھی بڑے مجرم ہیں؟

سعودی عرب کا ایران کے خلاف امریکی صدر کے بیان کا خیر مقدم

روس، چین، برطانیہ، فرانس اور جرمنی کی ایٹمی معاہدے کی حمایت

احسن اقبال کے بیان پر بطور سپاہی اور پاکستانی دکھ ہوا: ترجمان پاک فوج

امریکا سی پیک پر اپنے فتوے اپنے پاس ہی رکھے: سعد رفیق

آرمی چیف کو معیشت پربات کرنے کا پوراحق ہے: خورشید شاہ

قومی دھارا یا اشنان گھاٹ

امریکہ اور ترکی میں لفظی جنگ میں شدت ،ہمیں امریکہ کی کوئی ضرورت نہیں، ترک صدر

عراقی صدر کے مشیر نے عراق میں خانہ جنگی کے حوالے سے خبردار کردیا

شاہ سلمان کے دورہ روس کے مضمرات

ٹرمپ کا ایران سے جوہری معاہدہ جاری نہ رکھنے کا اعادہ

پاکستان نے ورلڈ بیچ ریسلنگ میں پہلی مرتبہ گولڈ میڈل جیت لیا

سیاسی مسائل حج کی ادائیگی میں رکاوٹ نہیں بننے چاہئیں

کوئٹہ کا ہزارہ قبرستان جہاں زندگی کا میلہ سجتا ہے

قادیانیوں کو مسلمان نہیں کہا: رانا ثناءاللہ

ایران کے خلاف امریکہ کی نئی پالیسی کا متن

اپنے دفاع کے لیے کسی پر حملے سے بھی گریز نہیں کریں گے: ترک صدر

امریکا کو مشترکہ آپریشن کی دعوت، متعدد سیاسی جماعتیں چراغ پا

سعودی عرب اور امارات کی اسلامی ممالک کو تقسیم کرنے کی سازش

پاکستان میں لاپتہ شیعہ افراد کی بازیابی کے لئے مظاہرے اور گرفتاریاں

مسلم لیگ (ن) نے آج پاکستان کی عدلیہ پردوسری بارحملہ کیا: عمران خان

حامد کرزئی کے امریکہ پراعتراضات میں وزن ہے

روزانہ 150ہزار بیرل تیل کے پیسے بارزانی اور طالبانی کے جیب میں جارہے ہیں

امریکی انسٹی ٹیوٹ: ہمارا قاسم سلیمانی کون ہے؟

ٹرمپ کی طرف سے ’ڈو مور‘ پر عمل کا دعویٰ

2017-09-28 00:14:27

شیعہ عزاداری امام حسین کے صدقے میں زندہ ہیں

IMG08384473

حضرت آیت الله حسین مظاهری نے مسجد امیرالمؤمنین(ع) جی روڈ پر ہونے والی مجلس عزا سے خطاب کرتے ہوئے کہا : عزاداری بلاوں کی رفع و دفع ہونے میں نہایت موثر ہے ۔

انہوں نے اپنی بحث کے ابتداء میں عزاداری کے فوائد کی جانب اشارہ کیا اور کہا: سب سے پہلا فائدہ جو عزاداری پر مرتب ہے وہ خدا اور اهل بیت اطھار (ع) کی رضایت کا حصول ہے ، یہاں تک خود اہل بیت علیھم السلام نے فرمایا ہے کہ حضرت سید الشهداء(ع) کی عزاداری سے بالاتر ثواب موجود نہیں ہے اور اہل بیت علیھم السلام بھی عزاداری کے لئے خاص اہمیت کے قائل تھے ۔

حضرت آیت الله مظاهری نے یہ بیان کرتے ہوئے کہ عزاداری بلاوں کی رفع و دفع ہونے میں نہایت موثر ہے کہا: شیعوں کو اس عزاداری سے بہت فائدہ پہونچا ہے ، ۸ سالہ ایران و عراق جنگ میں نصیب ہونے والی پیروزی اسی عزاداری کا صدقہ ہے ، جنگی محاظ پر ہمارے مجاہدین کی معنوی طاقتیں انہیں عزاداریوں کی بنیادوں پر تھیں ۔

حوزه علمیہ اصفهان کے سربراہ نے یاد دہانی کی: ہم جب امام حسین(ع) کی مجلسوں میں شریک ہوتے ہیں اور خدا سے درخواست رکھتے ہیں اور وہ درخواست چونکہ ہمارے حق میں بہتر نہیں ہے قبول نہیں ہوتی اس کے باوجود خدا ہمارے حق میں برترین مصلحت کو قبول کرلیتا ہے ۔

حوزات علمیہ میں اخلاقیات کے استاد نے مزید کہا: ممکن ہے کوئی فقیر اپنے فقر و غربت کو دور کرنے کی غرض سے عزاداری میں شریک ہو، حضرت امام حسین(ع) سے متوسل مگر اس کا فقر و غربت دور نہ ہو اس کے باوجود خداوند متعال اسے ثروت و مال و دولت سے بالاتر نعمت عطا کرے گا جسے شاید وہ سمجھ نہ پائے  ۔

انہوں نے مزید کہا: جو بھی یا حسین کہے گا ولو غیر مسلمان ہو اس میں اس کے مثبت آثار نمایاں ہوں گے کیوں کہ عزاداری میں شرکت کے اثار ہماری اور آپ کے تصور سے کہیں بالاتر ہے ۔

حضرت آیت الله مظاهری نے آیت الله دستغیب کی کتاب گناهان کبیره کا ایک واقعہ نقل کرتے ہوئے کہا: مرحوم آیت الله دستغیب نے اپنی کتاب میں تحریر کرتے ہیں کہ میرے دوست کے بیوی اور بچے مہلک بیماری سے میں مبتلا ہوگئے تھے اور کما کی حالت میں چلے گئے ، وہ مضطرب حال اپنے گھر سے نکلے کہ ناگہاں انہیں محسوس ہوا کہ ان کے پڑوسی نے حضرت امام حسین علیہ السلام کی مجلس برپا کی ہے ، آپ کا دل منقلب ہوگیا اور اپنی بیوی بچوں کی صحت یابی کے لئے مجلس میں جاکر بیٹھ گئے ، وہ وہاں حضرت فاطمہ زھراء سلام اللہ علیھا سے متوسل ہوئے اور آپ کو حضرت امام حسین علیہ السلام کے حق کی قسم دی اور جب تھوڑی دیر بعد اپنے گھر لوٹے تو انہوں نے تعجب خیز نگاہوں سے دیکھا کہ ان کی بیوی و بچے صحت یاب ہوچکے ہیں اور بیٹھے کھانا کھا رہے ہیں ، انہوں نے ان سے پوچھا کیا کہ یہ کیسے ہوا ؟ تو آپ کے بچے نے کہا کہ میں نے خواب کے عالم میں دیکھا کہ پنج تن علیھم السلام ہمارے بالیں پر تشریف لائے ہیں اور حضرت فاطمہ زھراء سلام اللہ علیھا نے امام حسین(ع) کہا کہ میرے لال ان ماں بچوں کو شفا دے دو تو امام حسین(ع) میرے بالیں پر آئے اور انہوں نے ہمارے اوپر ایک ہاتھ کھینچا اور مجھے شفا مل گئی مگر انہوں ماں کو چھوڑ دیا تو حضرت فاطمہ زھراء سلام اللہ علیھا نے فرمایا کہ میرے لال آپ نے اس کی ماں کو شفا کیوں نہیں دیا تو امام حسین(ع) نے فرمایا کہ وہ نمازیں نہیں پڑھتی ہے اس لئے وہ شفا کے لائق نہیں ہے ، اس لمحہ حضرت فاطمہ زھراء سلام اللہ علیھا نے حضرت امام حسین علیہ السلام کو مخاطب کرتے ہوئے فرمایا کہ میرے لال آپ انہیں بھی شفا دیجئے کیوں کہ اس گھر کے مرد نے ہمیں آپ کے حق کی قسم دی ہے تو امام حسین علیہ السلام نے اپنی مادر گرامی کے حکم پر عمل کرتے ہوئے ماں کو بھی شفا دے دی ۔

حوزات علمیہ میں اخلاقیات کے استاد نے کہا: ہم اهل بیت(ع) کی کرامتوں سے بہت زیادہ روبرو رہے ہیں ، شیعہ حضرت امام حسین علیہ السلام کی عزاداری کے صدقے ہی میں زندہ ہیں ، دین اسلام اور مذھب شیعہ کے دشمن ، رسول اسلام(ص)  کی حیات سے لیکر آج تک مسلسل اسلام و شیعت کو مٹانے کی کوشش میں لگے ہوئے ہیں مگر مجلس امام حسین(ع) نے اسے مٹنے سے بچا رکھا ہے ۔

حوزه علمیہ اصفهان کے سربراہ نے کہا: مرحوم جناب مطهری نے مجھ سے بیان کیا کہ میں نے ایک دن حاج میرزا علی شیرازی کو دیکھا کہ وہ اس طرح زار و قطار رو رہے ہیں کہ ان میں تدریس کی طاقت نہیں ہے ، تو میں ان سے دریافت کیا کہ آپ کیوں اس قدر بے تاب ہیں ، آپ نے فرمایا کہ میں نے کل رات خواب دیکھا ہے کہ مرگیا ہوں اور مجھے قبر میں اتار دیا گیا ہے ، میرے سراہانے ایک سفید رنگ کا کتا بیٹھا ہے ، میں سمجھ گیا کہ یہ دنیا میں میری بد اخلاقی ہے کہ ناگہاں مجھے یاد آیا کہ میں حضرت امام حسین علیہ السلام کی مجسلیں پڑھا کرتا تھا ، میں حضرت امام حسین علیہ السلام سے متوسل ہوا اور آپ سے عرض کیا مولا یہ لوگ قبر میرے ساتھ کتا دفن کرنا چاہتے ہیں ، ابھی میری دعا ختم نہیں ہوئی تھی کہ حضرت امام حسین علیہ السلام خود تشریف لائے اور اس کتے کو مجھ سے دور کرنے کو کہا اور پھر میری نیند کھل گئی ۔

زمرہ جات:   Horizontal 3 ،
دیگر ایجنسیوں سے (آراس‌اس ریدر)