امریکی یاترا: کیا پاکستان نیوکلیر پروگرام کو محدود کرنے پر تیار ہو جائے گا؟

’’ کالعدم تنظیموں کا انتخابات میں حصہ لینا، جمہوریت کے لیے خطرہ ہے‘‘،بلاول بھٹو

’پی پی اور ن لیگ میں پس پردہ نیا مک مکا چل رہا ہے‘

ٹیکس ادائیگی سے متعلق غلط بیانی عمران اسماعیل کے گلے پڑگئی

سعودی عرب: خواتین کو طیارے اڑانیکی تربیت کی اجازت

خان صاحب عوام میں مقبول نہیں ،بلاول کا دعویٰ

پارلیمنٹ نے اسرائیلی وزیراعظم سے جنگی اختیارات چھین لیے

کراچی:الیکشن میں دہشت گردی کی سازش،2 گرفتار

صہیونی جیل میں اسیر 4 فلسطینیوں کی بھوک ہڑتال ہنوز جاری

اسپین کے کئی شہروں کا اسرائیلی بائیکاٹ مہم میں شمولیت کا اعلان

ورثے میں ہمیں یہ غم ہے ملا، بلاول کا ٹوئٹ

پاکستان نے زمبابوے کو تیسرے ون ڈے میں شکست دے دی

لیبیا میں کنٹینر میں دم گھٹنے سے 8 غیرقانونی تارکین وطن ہلاک

برطانوی وزیر اعظم تھریسامے کی مشکلات میں اضافہ، ایک اور وزیر مستعفی

افغانستان میں امریکا کی حکمت عملی ناکام ہو گئی، حامد کرزئی

افغانستان میں داعش کا حملہ، طالبان کمانڈر سمیت 20 ہلاک

ایرانی افواج ہر طرح کی جارحیت کا جواب دینے کے لئے آمادہ و تیار ہیں:ایرانی وزیر دفاع

اسرائیل نے غزہ تک ایندھن کی ترسیل بند کر دی

بن سلمان کی ذاتی سیکورٹی "موساد” کے حوالے، امریکی تجزیہ کار

چین میں گرمی سے روڈ پگھلنے لگے

سعودی عرب : خواتین ڈرائیورزکیلئے زنانہ جیلوں کی تیاری

اسرائیل کی مسجد اقصیٰ کے قریب پھر کھدائی

زرداری اور فریال کا نام ای سی ایل سے خارج

مستونگ خود کش حملہ آور کا ڈی این اے ٹیسٹ

خواجہ حارث نے نواز شریف کے جیل ٹرائل کا مقصد بتادیا

عمران خان کو نیب نے آج طلب کرلیا

رؤف صدیقی سردارشیر محمد رند کے حق میں دستبردار

صفدر کی گرفتاری میں رکاوٹ ڈالنے والوں کی ضمانت میں توسیع

نادرا آج سے ’رزلٹ ٹرانسمیشن سروس‘ ایکٹیویٹ کرے گا

نواز اورمریم کی سزاؤں کیخلاف درخواست کی سماعت کل ہوگی

حافظ آباد میں پی ٹی آئی اور ن لیگی کارکنوں میں تصادم

اسکول جس میں صرف ایک بچی پڑھتی ہے

بجلی مہنگی کرنے کیلئے نیپرا کو درخواست ارسال

شہباز ، عمران، بلاول کو وزیر اعظم کے برابر سکیورٹی فراہم کرنے کا فیصلہ

شیعہ رہنماوں کی کالعدم جماعت کے سرغنہ لدھیانوی سے ملاقات کی رُداد، علامہ امین شہیدی کی زبانی

گورنر اسٹیٹ بینک کیخلاف 22 سینیٹرز کی درخواست مسترد

شاہد آفریدی کی سراج رئیسانی کے اہلخانہ سے تعزیت

یادداشت کیلئے چارسائنسی انداز

یاہو میسنجر کی موت واقع ہو گئی

جنوبی کوریا:ہیلی کاپٹر حادثے میں5افراد ہلاک

سی ای او پی آئی اے کی دعوت پر ایئر سفاری کی، ڈی جی سی اے اے

الیکشن کمیشن عمران خان کی تقاریر پر پابندی لگائے، ن لیگ

این اے124: پیپلز پارٹی تحریک انصاف کے حق میں دستبردار

نواز شریف کو پیش نہ کر کے کیا چھپایا جا رہا ہے؟

فواد حسن فواد ایک روزہ ریمانڈ پر نیب کی تحویل میں

نگراں حکومت نے شہباز شریف کے خط کا جواب دےدیا

بھارت میں چاند ستارے والا سبزجھنڈا لگانے پر سماعت

امریکی صدر کے دورے کے خلاف فنلینڈ کے عوام کے مظاہرے

روس کا ایران میں 50 ارب ڈالر کی سرمایہ کاری کا فیصلہ

اماراتی شہزادہ قطر فرار، ابوظہبی کے حکمراں خاندان پر تنقید

دبئی نے نئے ویزہ قوانین متعارف کروا دیے

اسرائیل کا حماس کے ساتھ جنگ میں شکست کا اعتراف

اسرائیل کو ‘صیہونی ریاست’ قرار دینے کیلئے بل تیار

ایران کی مسلح افواج کے سربراہ کی صدر ممنون حسین سے ملاقات

امریکہ کو ایرانی بحریہ کی طاقت کا اندازہ ہوگیا ہے؛بریگیڈیر رمضان شریف

فلسطین کے بارے میں امریکی شیطانی پالیسیاں ناکام ہوں گی:آیت اللہ سید علی خامنہ ای

سعودیہ میں ایران کا مقابلہ کرنے کی صلاحیت نہیں ہے:علی محمد دوشنبہ

’’تمام جماعتوں سے نئے میثاقِ جمہوریت پر بات کرنا چاہتا ہوں‘‘

فرانسیسی ٹیم کا وطن واپسی پر شاندار استقبال

ترکی میں فوجی بغاوت کی ناکامی کے دو سال مکمل

کموڈور عدنان خالق کی ریئر ایڈمرل کے عہدے پر ترقی

افغان صدر کانگراں وزیراعظم اور آرمی چیف کو ٹیلی فون

یوٹا میں طوفانی بارشوں نے تباہی مچادی

شہزادہ چارلس اور ولیم نے ٹرمپ سے ملنے سے انکار کر دیا

بھارت میں گوگل کاسوفٹ ویئر انجینئر بے دردی سے قتل

امریکی سفارت کاروں کو طالبان سے براہ راست مذاکرات کی ہدایت

روسی بمبار جہازجنوبی کوریا میں داخل،کوریا کا احتجاج

میاں صاحب نے کشکول کے بجائے معیشت توڑدی،اسد عمر

بلاول کو پارٹی میں صرف ’ابا‘ ہی کیوں نظر آتا؟سراج الحق

ن لیگ ،پی پی نے کرپشن کے ریکارڈ توڑدئیے،عمران خان

فخر زمان کی سنچری، پاکستان 9وکٹ سے فاتح

2015-10-18 11:56:40

امریکی یاترا: کیا پاکستان نیوکلیر پروگرام کو محدود کرنے پر تیار ہو جائے گا؟

obama_sharif_mپاکستانی وزیر اعظم میاں نواز شریف امریکی یاتراپر روانہ ہو گئے ہیں جہاں وہ امریکی صدر باراک اوبامہ سے وائٹ ہاوس میں ون ٹو ون ملاقات کریں گے۔ – امریکی اخبار ’واشنگٹن پوسٹ ‘ یہ دعویٰ کررہا ہے کہ اس ملاقات میں پاکستان کے ساتھ امریکہ سول ایٹمی معاہدہ کرسکتا ہے جس سے دونوں ممالک کے تعلقات میں بہتری اور قربت آئے۔وزیر اعظم یہ دورہ صدر باراک اوبامہ کی دعوت پر کررہے ہیں، جو انہیں امریکہ کی قومی سکیورٹی مشیر سوزان رائس نے اگست میں دورہ پاکستان کے دوران دی تھی۔ -تجزیہ نگار ڈیوڈ اگنیشس نے اپنے کالم میں دعویٰ کیا کہ وائٹ ہاؤس پاکستان کے جوہری ہتھیاروں اور ان کے ڈلیوری سسٹم یعنی ترسیل کے نظام پر نئی حدود اور کنٹرول لاگو کرنے کے لیے سفارتی ذرائع تلاش کر رہا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ ان مذاکرات کے نتیجے میں امریکہ بھارت سول جوہری معاہدے کی طرز پر پاکستان کے ساتھ بھی ایک جوہری معاہدے کی راہ ہموار ہو سکتی ہے۔ -تاہم یہ بات واضح نہیں ہے کہ پاکستان کس حد تک ان شرائط کو ماننے پر آمادہ ہو گا۔ پاکستان میں ایٹمی پروگرام کے حوالے سے سخت رویہ اختیار کیا جاتا ہے۔ رائے عامہ بھی پاکستان کی ایٹمی صلاحیت کو ملک کی حفاظت کے نقطہ نظر سے ضروری اور اہم سمجھتی ہے۔ ملک کی کسی بھی سیاسی حکومت کے لئے فوج کی مرضی و منشا کے بغیر ایٹمی پروگرام کے حوالے سے کوئی معاہدہ کرنا ممکن نہیں ہو گا۔ پاکستان کی طرف سے اس حوالے سے کسی واضح موقف کا اظہار نہیں کیا گیا۔ تاہم امریکہ میں پاکستان کے سفیر جلیل عباس جیلانی نے ایک بار پھر یہ بات دہرائی ہے کہ پاکستان کا ایٹمی پروگرام دفاعی نوعیت کا ہے۔ واشنگٹن کی طرف سے پاکستان کو سول نیوکلیئر ڈیل کی جو پیشکش کی جا رہی ہے اور اس کے بدلے میں جن پابندیوں کی بات ہو رہی ہے، ان سے یہ اندازہ کرنا مشکل نہیں ہے کہ امریکی حکومت اس حوالے سے بھارتی مفادات کی حفاظت کرنے کی خواہشمند ہے۔ گزشتہ چند برسوں میں امریکہ نے بھارت کے ساتھ تعلقات کو مستحکم کیا ہے اور اسی رفتار سے پاکستان سے فاصلہ بھی پیدا کیا گیا ہے۔ اگرچہ یہ موقف اختیار کیا جاتا رہا ہے کہ پاکستان نے دہشت گردی کی جنگ میں اچھے اور برے طالبان کی تخصیص کر کے بداعتمادی کی فضا پیدا کی ہے اور خود کو ناقابل بھروسہ ورکنگ پارٹنر ثابت کیا ہے۔ لیکن اس جنگ میں پاکستان نے ہی امریکہ سے تعاون کیا ہے اور امریکہ بھی پاکستان کی امداد کا اعتراف کرتا رہتا ہے۔ تاہم بھارت کے ساتھ امریکی وابستگی کی وجہ سے امریکہ اور پاکستان کے درمیان خلیج بڑھتی جا رہی ہے۔امریکہ کے ساتھ سول ایٹمی معاہدہ کے حوالے سے پاکستانی حکومت کو احتیاط اور قومی مفاد کے مطابق فیصلے کرنے کی ضرورت ہے۔ اگرچہ یہ نعرہ بے بنیاد ہے کہ ایٹمی ہتھیار خود حفاظتی کا موثر ذریعہ ہیں کیونکہ یہ ہتھیار تباہی اور ہلاکت کی وجہ بن سکتے ہیں۔ کوئی ملک یا خطہ جوہری ہتھیار استعمال کر کے مکمل تباہی سے محفوظ نہیں رہ سکتا۔ اس نقطہ نظر سے پاکستان کے لئے مزید ایٹمی ہتھیاروں کا حصول غیر ضروری اور قومی وسائل کو ضائع کرنے کے مترادف ہو گا۔ پاکستان اس کے برعکس خود کو ذمہ دار ایٹمی قوت تسلیم کرواتے ہوئے سفارتی کامیابی حاصل کر سکتا ہے۔

زمرہ جات:   پاکستان ، دنیا ،
دیگر ایجنسیوں سے (آراس‌اس ریدر)

یادوں کے جھروکے

- سحر ٹی وی