پاک ایران تجارتی سرگرمیوں میں 35 فیصد اضافہ: سعودیہ کی پریشانی میں اضافہ

شہید بھٹو پہلی وزیراعظم خاتون تھیں جو وزیراعظم ہوتے ہوئے بچے کی پیدائش کے عمل سے گزریں

ورلڈ کپ میں تیونس کو بیلجیئم کے خلاف 2-5 سے شکست

مفتی نور ولی محسود تحریکِ پاکستان طالبان کے نئے امیر مقرر

کیا تیونس کا حج بائیکاٹ آل سعود کو یمن پر مظالم سے روک سکتا ہے؟

جنوبی وزیرستان: فوجی کارروائی میں 6 دہشت گرد ہلاک، 2 جوان شہید

میری خوشی کی انتہا اس وقت نہ رہی جب نیمار میرے ساتھ آ کر کھڑا ہو گیا: احمد رضا

این اے 243 کراچی: عمران خان کے کاغذات نامزدگی کےخلاف اپیل مسترد

ملا فضل اللہ کی موت پر بھارت میں کھلبلی

الحدیدہ جنگ: 25000 کا بے بس لشکر

کیا زعیم قادری نے ’قلعہ لاہور‘ میں شگاف ڈال دیا؟

بنی اسرائیل کی حقیقت قرآن مجید کی روشنی میں

ارجنٹینا فٹبال ٹیم کی شکست کی کہانی چہروں کی زبانی

دھوپ اور بارش سے محفوظ رکھنے والی ’’ڈرون چھتری‘‘

میلانیا کی جیکٹ پر لکھا جملہ: مجھے واقعی کوئی فرق نہیں پڑتا کیا آپ کو پڑتا ہے؟

میرا اختلاف نواز شریف کے فائدے میں تھا، چوہدری نثار

10 غذائیں جو آپ کو ہر عمر میں جوان رکھیں

’ لگتا ہے سیاسی وڈیروں نے پمپ کھول لئے ہیں‘

ﺑﻘﯿﻊ ﺍﻭﺭ ﻗﺪﺱ ﭘﺮ ﺳﯿﺎﺳﺖ کیوں؟

کینسر کے خطرے سے بچانے والی بہترین غذا

داعش کی معاونت پر مذہبی رہنما کو سزائے موت

اسرائیلی وزیراعظم کی اہلیہ پر بھی فرد جرم عائد

پاکستان کی طالبان امیر ملا فضل اللہ کی ہلاکت کی تصدیق

مہران یونیورسٹی میں ڈیجیٹل ٹرانسفرمیشن سینٹر قائم کیا جائیگا،ڈاکٹر عقیلی

پرویز مشرف آل پاکستان مسلم لیگ کی صدارت سے مستعفی

ڈونلڈ ٹرمپ کی روسی صدر سے ملاقات کے لیے نئی حکمت عملی تیار

یمن میں سعودی جاسوسی ڈرون طیارہ تباہ

چھوٹی سی چیری بڑے فائدوں والی

بیگم کلثوم کی طبیعت قدرے بہتر پر خطرے سے مکمل طور پر باہر نہیں: میاں نواز شریف

انتخابی نشانات کی سیاست: ووٹر حیران، امیدوار پریشان

امریکہ افغان طالبان سے بات چیت کی خواہش کیوں ظاہر کر رہا ہے؟

آیت اللہ سید خامنہ ای نے قومی فٹبال ٹیم کو اچھی کاکردگی پر سراہا

بحرینی عدالت نے شیخ علی سلمان کو جاسوسی کے الزامات سے بری کردیا

فیفا ورلڈ کپ 2018: اسپین نے ایران کو 0-1 سے شکست دے دی

آئی بی اے کراچی میں منعقدہ پاکستان کی پہلی فائنل ائیر پروجیکٹس کی آن لائن نمائش کا احوال

امریکہ کی خارجہ پالیسی بحران سے دوچار

صحافی کے قتل کے خلاف بھارتی کشمیر میں ہڑتال، مظاہرے

زعیم قادری کیا شریف خاندان کے بوٹ پولش کر پائیں گے ؟

کیا عدالت فوج کے خلاف اقدام اٹھائے گی؟

کیا نواز شریف اور مریم نواز کا نام ای سی ایل میں شامل ہوگا ؟

’کراچی والوں کی جان ٹینکر مافیا سے چھڑائیں گے‘

پاکستان کے یہودی ووٹر کہاں گئے؟

پاکستان کی خاندانی سیاسی بادشاہتیں

یاہو‘ نے اپنی انسٹنٹ میسیج سروس ایپلی کیشن ’یاہو‘ میسینجر کو بند کرنے کا اعلان کردیا

انفیکشن کی بروقت شناخت سے دنیا بھرمیں ہزاروں لاکھوں جانیں بچائی جاسکتی ہیں

سفید سرکے کے کئی فوائد ہیں، اس طرح سیب کے سرکے کے بھی متعدد طبی فوائد ہیں

یمن تا فلسطین، دشمن ایک ہی ہے

کیا افغان سیکیورٹی اہلکار طالبان کو کنٹرول کر سکے گے ؟

ٹویٹر کیا ایسا کر پائے گا ؟

پاکستان میں سمندری پانی کیا قابل استعمال ہوگا ؟

عمران خان، آصف زرداری اور مریم نواز کے اثاثوں کی تفصیلات منظر عام پر آ گئیں

فٹبال ورلڈ کپ کے شوروغل میں دبی یمنی بچوں کی چیخیں

رپورٹ | یمن کی تازہ صورتحال ۔۔۔ یہاں سب بکنے لگا ہے !!!

دہشتگرد کالعدم جماعتوں کو الیکشن لڑنے کی اجازت دینے کی بجائے قانون کے شکنجے میں کسنے کی ضرورت ہے، علامہ راجہ ناصر عباس جعفری

انڈونیشیا کی جھیل میں کشتی الٹنے سے 200 افراد ہلاک

بلوچستان: سی ٹی ڈی آپریشن،خاتون سمیت 4 دہشت گرد ہلاک

ہائیڈرو گرافی کا عالمی دن ، پاک بحریہ کے سر براہ کا پیغام

امریکہ کے شکست قریب ہے؟

شیخ علی سلمان پر مقدمہ، غیر سرکاری تنظیموں کا احتجاج

عمران، شاہد خاقان، گلالئی،فہمیدہ مرزا، فاروق ستار، لدھیانوی، مشرف کے کاغذات مسترد

ایران نے امریکی صدر سے بات چیت کا امکان مسترد کر دیا

راہ حق پارٹی، جے یو آئی (ف) کے آشرباد سے کالعدم جماعتوں کا سیاسی پلٹ فارم

لندن کی سڑکوں پر بھاگتا پاکستانی سیاست دان

بن زاید کی اسرائیلی عہدے داروں سے ملاقات ؟

انتخابات 2018: الیکشن کمیشن نے ساڑھے تین لاکھ فوجی اہلکاروں کی خدمات مانگ لیں

علماء یمن نے بڑا کردیا

چوہدری نثار تھپڑ مار کیوں نہیں دیتے؟

ٹرمپ بھیڑیا ہے

ٹرمپ نے بوکھلاہٹ میں شمالی کورین جنرل سے مصافحہ کے بجائے سلیوٹ کر ڈالا

الیکشن کمیشن پاکستان راہ حق پارٹی کی رجسٹریشن منسوخ کرے

اسرائیلی فوج نے اپنا الحاج شیخ الاسلام متعارف کرادیا – عامر حسینی

2018-03-12 08:37:03

پاک ایران تجارتی سرگرمیوں میں 35 فیصد اضافہ: سعودیہ کی پریشانی میں اضافہ

epa06052622 Foreign Minister of Iran Mohammad Javad Zarif during a joint press statement with German Foreign Minister Sigmar Gabriel (not seen) at the Foreign Ministry in Berlin, Germany, 27 June 2017. Gabriel and Zarif met for bilateral talks.  EPA/CLEMENS BILAN

ایران کے وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ مشکلات کے باجود ایران اور پاکستان کے درمیان تجارتی روابط میں بہتری آرہی ہے اور پیچھلے سال دوطرفہ تجارت کے حجم میں 35 فیصد اضافہ دیکھنے میں آیا ہے۔

یہ بات ‘محمد جواد ظریف’ نے دورہ پاکستان کے موقع پر اسلام آباد میں پاک ایران بزنس فورم سے خطاب کرتے ہوئے کہی.

اس سمینار میں پاکستانی وزیر خارجہ ‘خواجہ محمد آصف’ اور ایرانی سفیر ‘مہدی ہنردوست’ سمیت اعلی سطحی ایرانی اقتصادی وفد کے اراکین بھی شریک تھے.

ظریف نے بتایا کہ ایران، پاکستان کے ساتھ ہر شعبے میں بالخصوص اقتصادی اور تجارتی شعبوں میں تعلقات بڑھانے کا خواہاں ہے.

انہوں نے مزید کہا کہ تجارتی روابط میں اضافے سے ظاہر ہوتا ہے کہ دونوں ملکوں کے درمیان اقتصادی شعبوں میں تعلقات میں اضافے کی بہترین صلاحیت موجود ہے.

ایرانی وزیر خارجہ نے بتایا کہ ہم پاکستان کی توانائی کی ضروریات کو پورا کرنے کے لئےتیار ہیں اور اس حوالے سے تیل، گیس اور بجلی کے شعبوں میں ہر طرح کے تعاون کے لئے بھی آمادہ ہیں.

انہوں نے کہا کہ ہم نے پاک ایران گیس پائپ لائن منصوبے میں دو ارب ڈالر کی سرمایہ کاری کی ہے ہر ہم امید رکھتے ہیں کہ پاکستانی بھائی اس معاہدے کو پورا کریں گے.

ظریف نے مزید کہا کہ ایران ہر ایسے منصوبے بشمول پاک،چین اقتصادی راہداری منصوبے (CPEC) کا حصہ بننے کو تیار ہے جس سے خطے میں بسنے والے عوام کی خوشحالی کا باعث بنیں.

انہوں نے کہا کہ اگر ایران سی پیک منصوبے کا حصہ بنے گا تو اس سے گوادر اور چابہار بندرگاہیں ایک دوسرے کو فائدہ پہنچانے کا ذریعہ بنیں گی.

ظریف نے بتایا کہ ہم چابہار فری زون میں پاکستانی سرمایہ کاروں اور کمپنیوں کی شراکت داری کا خیرمقدم کریں گے. گزشتہ 10 ماہ میں پاکستان، ایرانی مصنوعات کی برآمد کے لئے آٹھویں بڑی منڈی رہا ہے.

انہوں نے مزید کہا کہ ہم پاکستان کے ساتھ سائنس، صنعتی، جدید ٹیکنالوجی، نینو ٹیکنالوجی، ڈیموں، سڑکوں اور بڑے توانائی کے پلانٹس کی تعمیر کے لئے ہر قسم کے تعاون کرنے کے لئے آمادہ ہیں.

ظریف نے کہا کہ ایران ہر شعبے میں پاکستان کے ساتھ اپنے تجربات کے تبادلے کے لئے بھی تیار ہے.

یہ بات قابل ذکر ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر خارجہ محمد جواد ظریف پاکستان کے تین روزہ سرکاری دورے پر گزشتہ رات اسلام آباد پہنچ گئے.

اسلام آباد میں اپنے قیام کے دوران ظریف پاکستان کی سیاسی اور عسکری قیادت سے اہم ملاقاتیں کریں گے.

یہ بات قابل ذکر ہے کہ ایرانی وزیر خارجہ کے اس دورے کا مقصد دونوں برادر ملکوں کے درمیان اقتصادی تعاون کو فروغ دینا ہے.

ظریف کا یہ دورہ گزشتہ ستمبر میں ان کے پاکستانی ہم منصب خواجہ محمد آصف کے دورہ ایران کے جواب میں کیاجارہا ہے.

زمرہ جات:  
دیگر ایجنسیوں سے (آراس‌اس ریدر)

اسے کہتے ہیں انصاف

- ایکسپریس نیوز

ماضی کا شہر بے مثال

- ایکسپریس نیوز

تھرکول اور سندھ

- ایکسپریس نیوز

سیاسی داؤ پیچ

- ایکسپریس نیوز

اپنا مستقبل بچائیں …

- ایکسپریس نیوز

میڈیا کی صحبت

- ایکسپریس نیوز

میڈیا کی صحبت

- ایکسپریس نیوز