خلائی مخلوق “ کے بارے قرآن کیا کہتا ہے؟

ٹرمپ نے بوکھلاہٹ میں شمالی کورین جنرل سے مصافحہ کے بجائے سلیوٹ کر ڈالا

الیکشن کمیشن پاکستان راہ حق پارٹی کی رجسٹریشن منسوخ کرے

اسرائیلی فوج نے اپنا الحاج شیخ الاسلام متعارف کرادیا – عامر حسینی

این اے 53 سے عمران خان کے کاغذات نامزدگی مسترد

الحدیدہ۔۔۔اب میڈیا خاموش کیوں ہے!؟

کیا احد چیمہ شہباز شریف کے لیے خطرے کی گھنٹٰی ہے؟

فضل اللہ کی ہلاکت کے بعد امریکا پاکستان سے کیا مطالبہ کرے گا؟

یمن میں پاکستانی لاشیں کیا کر رہی ہیں؟

جدید تر ہوتی جوہری ہتھیار سازی: آرمجدون زیادہ دور نہیں

نواز شریف اور ان کی بیٹی کا کردار سامنے لانا چاہتا ہوں، چوہدری نثار

مسلم لیگ نواز اور نادرا چئیرمین کے مبینہ ساز باز کی کہانی

آنیوالے انتخابات میں کسی مخصوص امیدوار کی حمایت نہیں کرتے، علامہ عابد حسینی

امریکی مرضی سے ملی حکومت پر لعنت بھیجتا ہوں، سراج الحق

افتخار چوہدری عدلیہ کے نام پر دھبہ ہیں، فواد چوہدری

کاغذات نامزدگی پر اعتراضات جھوٹے، من گھڑت اور صرف الزامات ہیں، عمران خان

نادرا ووٹرز کی معلومات افشا کرنے والوں کے خلاف کارروائی کرے، الیکشن کمیشن

افغانستان میں جنگ بندی: ’ملا اشرف غنی زندہ باد‘

پشاور سے کالعدم ٹی ٹی پی کا انتہائی مطلوب کمانڈر گرفتار

جرمنی کی آسٹریا میں جاسوسی کا گھمبیر ہوتا معاملہ

کیا جرمنی نے آسٹریا میں جاسوسی کی؟

عورت چراغ خانہ ہے، شمع محفل نہیں!

کلثوم نواز کی حالت تشویشناک، نوازشریف اور مریم نواز کی وطن واپسی مؤخر

سانحہ ماڈل ٹاؤن کو چار سال گزر گئے لیکن ملزم آزاد ہیں، طاہر القادری

امریکی دباؤ کے باوجود ایران کیساتھ باہمی تعاون کو جاری رہیں گے: چین

انتخابات میں مخالفین کو عبرت ناک شکست دیں گے، آصف علی زرداری

آپ کی مدد کا شکریہ عمران خان، اب آپ جاسکتے ہیں!

کالعدم ٹی ٹی پی کا نیا امیر کون؟

امریکا کا چین کے خلاف بھی تجارتی جنگ کا اعلان

افغان صوبے ننگرہار میں خودکش دھماکا، 25 افراد ہلاک

عید الفطر 1439 ھ علامہ سید ساجد علی نقوی کا پیغام

انتخابات میں حصہ لینے کے خواہش مند 122 امیدوار دہری شہریت کے حامل نکلے

امریکا کے خلاف یورپ کا جوابی اقدام

سعودی عرب کا ذلت آمیز شکست کے بعد کھلاڑیوں کو سزا دینے کا اعلان

مُلا فضل اللہ کی ہلاکت، پاکستان اور خطے کے لیے ’اہم پيش رفت‘

’’رَبِّ النُّوْرِ الْعَظِیْم‘‘ کے بارے میں جبرئیل کی پیغمبر اکرمﷺ کو بشارت

پاکستان میں عید الفطر مذہبی جوش وجذبے کے ساتھ منائی جائے گی

یورپ میں بڑھتی مسلم نفرت اور اس کا حل

کیا مسلم لیگ ن کی پالیسی میں کوئی تبدیلی آ رہی ہے؟

عید فطر کا دن، خدا کی عبادت اور اس سے تقرب کا دن 

پھانسی دے دیں یا جیل بھیجیں

شفقنا خصوصی: بھاڑے کے ٹٹو اور پاک فوج

افغانستان میں ملا فضل اللہ کی ہلاکت کی اطلاعات

کلثوم نواز کی طبیعت بگڑ گئی، مصنوعی تنفس پر منتقل

سعودی عرب کی کھوکھلی دھمکیاں

ایم ایم اے اور اورنگزیب فاروقی کے مابین خفیہ ڈیل کیا ہے؟

ریحام خان کو عمران کے کنٹینر تک کون لایا تھا: ایک خصوصی تحریر

غدار ٹوپیاں اور جاسوس کبوتر

آج سے موبائل بیلنس پر ٹیکس ختم: 100 روپے کے کارڈ پر پورے 100 روپے کا بیلنس ملے گا

اول ماہ ثابت ہونے کا میعار کیا ہے؟

سوال: کیا مقلدین کے لیے ضروری ہے کہ عید فطر کے لیے اپنے مرجع کی طرف رجوع کریں؟

رمضان المبارک کے انتیسویں دن کی دعا

ریحام خان کی کتاب اور معاشرہ

شیخ رشید 2018 کے انتخابات میں حصہ لے سکتے ہیں: سپریم کورٹ

پاکستان میں انتخابات 2018؛ 2 ہزار368 امیدوار مختلف محکموں کے نادہندہ نکلے

حسن بن صباح کی جنت، فسانہ یا حقیقت؟

آرمی چیف کا دورہ افغانستان : کیا اشرف غنی کو سخت پیغام دیا گیا ہے؟

شیخ رشید نااہلی سے بچ گئے

بھارت کے حق میں بیان : کیا شہباز شریف بیرونی قوتوں کو اپنی طرف متوجہ کر رہے ہیں؟

سوال و جواب » فطرہ

رمضان المبارک کے اٹھائیسویں دن کی دعا

سی پیک، پاکستان کےلیے نہیں!

دورِ زوال کا نوحہ

ایران اور مشرق وسطی کے بارے میں امریکی سوچ خطرناک ہے

ہر نیک کام میں والدین کو شریک کرنا بہت زیادہ برکات کا حامل ہے

امریکی صدر اور شمالی کوریا کے سربراہ کی تاریخی ملاقات

ٹرمپ اور کم جونگ ان کے درمیان تاریخی ملاقات کا اعلامیہ جاری

سی پیک، پاکستان کےلیے نہیں!

کالعدم اہلسنت و الجماعت میں دراڑ: احمد لدھیانوی اور مسرور جھنگوی آمنے سامنے

مشرف کی متوقع واپسی، کیا سابق آمر کا کوئی سیاسی مستقبل ہے؟

کیا نواز شریف ملک سے بھاگ جائیں گے؟

2018-06-11 11:25:39

خلائی مخلوق “ کے بارے قرآن کیا کہتا ہے؟

aliens

پاکستان میں گزشتہ ایک ماہ سے جس خلائی مخلوق کا چرچا کیا جارہا ہے،وہ سیاسی کتھارسس کا ایک اظہارہے جس سے مراد پاکستان میں حکومتی اداروں پر اثر انداز ہونے والی مگر نظر نہ آنے والی قوتوں کی جانب اشارہ کرنا مقصود ہے ۔

بنیادی طور خلائی مخلوق سے مراد اللہ کی وہ مخفی مخلوق ہے جس کا ذکر تو سنا جاتا ہے مگر عام طور پر نظر نہیں آتی۔قرآن مجید میں اس خلائی مخلوقات بارے بڑے واضح ارشادات موجود ہیں ۔ممتاز عالم دین مفتی شبیر احمد قادری خلائی مخلوق بارے لکھتے ہوئے کہتے ہیں کہ بلاشبہ یہ کائنات بہت وسیع و عریض ہے، اس میں آئے روز نت نئی مخلوقات کا اضافہ بھی ہو رہا ہے۔ قرآنِ مجید نے جا بجا کائنات کی وسعت اور اس میں اضافے کا تذکرہ کیا ہے۔

 

ارشادِ باری تعالیٰ ہے ”تمام تعریفیں اللہ ہی کے لئے ہیں جو آسمانوں اور زمین (کی تمام وسعتوں) کا پیدا فرمانے والا ہے، فرشتوں کو جو دو دو اور تین تین اور چار چار پَروں والے ہیں، قاصد بنانے والا ہے، اور تخلیق میں جس قدر چاہتا ہے اضافہ (اور توسیع) فرماتا رہتا ہے، بیشک اللہ ہر چیز پر بڑا قادر ہے۔“ دوسرے مقام پر ارشاد ہے” اور آسمانی کائنات کو ہم نے بڑی قوت کے ذریعہ سے بنایا اور یقیناً ہم (اس کائنات کو) وسعت اور پھیلاو¿ دیتے جا رہے ہیں“

کائنات میں موجود مخلوقات کی حتمی تعداد بھی اللہ سبحانہ و تعالیٰ کے علم میں ہے۔ ارشاد ہے” اور وہ (ایسی مخلوقات کو) پیدا فرماتا جا رہا ہے جسے تم (آج) نہیں جانتے“

دوسرے کرّات، سیاروں اور کہکشاوں میں کسی زندہ مخلوق کا وجود انسان کے لیے صدیوں پرانا سوال ہے۔ زمانہ قدیم سے ہی انسان اس کے جواب کی تلاش میں رہا ہے، لیکن ابھی تک اس کا حتمی جواب حاصل نہیں کر سکا۔ قرآن مجید کی بعض تعبیرات میں آسمان میں دوسری مخلوقات کی موجودگی کی طرف اشارہ کیا گیا ہے۔ ارشادِ ربانی ہے”اور اس کی نشانیوں میں سے آسمانوں اور زمین کی پیدائش ہے اور ان چلنے والے (جانداروں) کا (پیدا کرنا) بھی جو اس نے اِن میں پھیلا دیئے ہیں، اور وہ اِن (سب) کے جمع کرنے پر بھی جب چاہے گا بڑا قادر ہے۔“ ایک دوسری جگہ فرمان ہوا”اور جو کچھ آسمانوں میں اور جو کچھ زمین میں ہے جملہ جاندار اور فرشتے، اللہ (ہی) کو سجدہ کرتے ہیں اور وہ (ذرا بھی) غرور و تکبر نہیں کرتے“

قرآنِ مجید میں العالمین کا لفظ 61 بار آیا ہے جو زمین اور ہمارے نظامِ شمسی کے علاوہ دیگر نظاموں اور ان میں مخلوقات کی موجودگی کا احتمال رکھتا ہے۔”سب تعریفیں اللہ ہی کے لئے ہیں جو تمام جہانوں کی پرورش فرمانے والا ہے“

یہ آیات خلاء اور دیگر سیاروں پر مختلف قسم کی مخلوقات کے موجود ہونے پر دلالت کرتی ہیں۔ اگرچہ ابھی تک سائنسدانوں نے قطعی طور پر اس سلسلہ میں کوئی فیصلہ نہیں کیا اور اجمالی طور پر اس کے امکانات ظاہر کیے ہیں، تاہم قرآنِ مجید نے واضح طور پر اس حقیقت کو بیان کیا ہے کہ آسمانوں میں بھی زندہ، چلنے والی مخلوقات موجود ہیں۔ تاہم یہ بات ذہن نشین رہے کہ انسان کو اللہ تعالیٰ نے احسنِ تقویم بنایا ہے اور اس کے سر پر اشرف الخلق کا تاج سجایا ہے۔ یہ دعویٰ کہ کائنات میں انسان سے بھی ذہین مخلوقات موجود ہیں، سراسر وہم ہے۔ کوئی بھی مخلوق انسان کے درجے کو نہیں پہنچ سکتی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

زمرہ جات:   سائنس / ٹیکنالوجی ،
دیگر ایجنسیوں سے (آراس‌اس ریدر)

انصاف نظر آنا چاہیے

- ایکسپریس نیوز

الیکٹیبلز کی سیاست

- ایکسپریس نیوز

اسمارٹ ٹیکنالوجی

- ایکسپریس نیوز

صحت سب کے لیے

- ایکسپریس نیوز

کشمیر کو یاد رکھیں گے

- ایکسپریس نیوز

عدالتی دھماکا

- ایکسپریس نیوز

افکار و نظریات

- سحر نیوز

یادوں کے جھروکے

- سحر نیوز

جام جم - 19 جون

- سحر ٹی وی