شوگر کے مریضوں کے لیے ’’نیم‘‘ کتنا فائدہ مند؟

اسرائیلی فوج کی کارروائی، فلسطینی رکن پارلیمنٹ کی اہلیہ گرفتار

شہادت حضرت امام محمد تقی علیہ السلام

میکسیکو صحافیو ں کیلئے خطرناک ترین ملک قرار

عمران خان کی جہانگیر ترین اور علیم خان سے ملاقات

یمنی فوج نے یکطرفہ بحری جنگ بندی کی مدت کے خاتمے کا اعلان کر دیا

گورنرخیبرپختونخواکا بھی استعفیٰ دینےکافیصلہ

منی لانڈرنگ کیس: آصف زرداری کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری

روس قطب شمالی میں ’تیزی سے اپنی فوجی قوت میں اضافہ کر رہا ہے‘

بم کا خدشہ، مختلف ممالک میں 9طیاروں کی ہنگامی لینڈنگ

فلسطین کی ڈاک آٹھ سال بعد اسرائیل سے بازیاب

ایران پر دباؤ بڑھانے کے لیے امریکی ’ایکشن ٹیم‘ کا اعلان

یورپ و برطانیہ کے درمیان بریگزیٹ پر مذاکرات آج

چین امریکا کو نشانہ بنانے کی تیاری کررہا ہے، پینٹاگون کا الزام

ولادی میر پیوٹن، رجب طیب اردوگان اور حسن روحانی کے درمیان جلد ملاقات کا امکان

بھارتی ریاست کیرالا میں سیلاب، 106 افراد ہلاک، لاکھوں بے گھر

گلیشیئر پگھلا تو طیارہ نکلا

چین تحریک انصاف کی حکومت کےساتھ مل کرکام کرنےکا خواہشمند

منی لانڈرنگ کی تحقیقات، نیب نے میاں منشا کو آج صبح طلب کرلیا

الیکشن کمیشن نے ضمنی انتخابات کا شیڈول تیار کر لیا

پاکستان کا نام گرے لسٹ سے نکالنے کے سلسلے میں اہم مذاکرات اور پیشرفت

پاک بھارت ڈی جی ایم اوز کا رابطہ، پاکستان کا بھارتی اشتعال انگیزی پر تحفظات کا اظہار

عمران خان نے پارلیمانی پارٹی کا اجلاس طلب کرلیا

نیا صوبہ بنانے کے لیے کراچی میں 50 لاکھ لوگوں کے دستخط کرائیں گے، فاروق ستار

پی آئی اے کے چیف فنانشل آفیسر نیر حیات کو عہدے سے ہٹا دیا گیا

اپوزیشن صرف پی ٹی آئی کےخوف کی وجہ سے اکٹھی ہوئی، شاہ محمود

16 لاکھ عازمین حج کی سعودی عرب آمد

کابل میں ایک اور حملہ، ملٹری ٹریننگ سینٹر پر دھاوا

عبدالقدوس بزنجو نئے اسپیکر بلوچستان اسمبلی منتخب ہوگئے

مرادعلی شاہ کی تقریرمیں کچھ نیانہیں تھا، خواجہ اظہار

سانگھڑ میں گیس و تیل کا ذخیرہ دریافت کرلیا گیا

پیپلزپارٹی نے موقف بدلا ،وہی جواب دے سکتے ہیں،رانا ثناء

عید پرسیکورٹی یقینی بنانے کیلئے رینجرزکا اعلیٰ سطح کا اجلاس

انورمجید گرفتار،نگراں وزیرداخلہ کا ڈی جی ایف آئی اے سےرابطہ

ایم ڈبلیوایم کے وفدکی قائم مقام افغان سفیر سے ملاقات،تعلیمی مرکز پر حملے کی مذمت ،شہداءکیلئے فاتحہ خوانی

ہم ترکی کے ساتھ کھڑے ہیں:قطر نے اعلان کر دیا

خواجہ آصف کے خلاف انکوائری کرنے کی منظوری

چلی میں بزرگوں کے مرکزمیں آگ لگنے سے 10 خواتین ہلاک

وزارت عظمیٰ کیلئے عمران خان اور شہباز شریف کے کاغذات منظور

پرویز الٰہی پنجاب اسمبلی کے اسپیکر منتخب،حلف اٹھا لیا

سوڈان : کشتی ڈوبنے سے اسکول کے 21 بچے ہلاک

تینتیس روزہ جنگ کو بارہ سال مکمل ہونے پر سید حسن نصر اللہ کا خطاب

نبی کریم ﷺکی مکہ معظمہ آمد

ایران کی جانب سے کابل دھماکے کی مذمت

بیت المقدس اور قلقیلیہ میں مکانات مسماری کی شرانگیز صہیونی مہم!

غزہ ۔ غرب اردن کے درمیان تجارتی راہ داری ایک ماہ بعد کھول دی گئی

ٹرمپ نے سابق سی آئی اے چیف کو بلیک لسٹ کر دیا

مسجد نبویﷺ کے خطیب ڈاکٹر حسین بن عبدالعزیزآل الشیخ خطبۂ حج دیں گے

یمن اور بحرین پر جارحیت کرنے والے شیطان سے بدتر ہیں، اہلسنت عالم دین

پاکستان کی افغان دارالحکومت کابل میں دہشت گردی کی مذمت

امریکا اقتصادی پابندیوں کے ذریعے ایران کو جھکانا چاہتا ہے: ایرانی نائب صدر

کمبوڈیا کے پارلیمانی انتخابات ،حکمران جماعت فاتح

دنیا کے کسی بھی ملک کو امریکہ پر کبھی اعتماد نہیں کرنا چاہئے:حزب اللہ لبنان

پاکستان کے یوم آزادی پر کینیڈا کے وزیراعظم کا پیغام

ایم ایم اے کا وزیراعظم کے لئے شہباز شریف کو ووٹ نہ دینے کا عندیہ

پرچم کشائی کی تقریب کے دوران بھارتی جھنڈ زمین پر آگرا

عمران نااہلی کیس، جسٹس اطہر من اللہ کی معذرت، بنچ ٹوٹ گیا

’’پہلے پٹائی کرو پھر دباؤ ڈال کر صلح کرلو‘‘

’’وزیر اعظم کی تقریب حلف برداری سادگی سے ہو گی‘‘

کوئٹہ میں کوئلے کی کان سے مزید 2 لاشیں نکال لی گئیں

علیم خان کے وکیل کو جواب دینے کیلئے آخری مہلت

محمود خان خیبرپختونخوا کے وزیراعلیٰ منتخب

جسٹس (ر) دوست محمد نے وزیر اعلیٰ ہاؤس خالی کردیا

مسجد اقصیٰ جل رہی ہے

پنجاب اسمبلی کا پہلا اجلاس، صوبہ بنانے کی قرار دادسامنےآگئی

غزہ میں حماس کے ساتھ جنگ بندی معاہدے کے قریب ہیں: اسرائیلی عہدیدار

اسرائیل کے خلاف مسلح مزاحمت جاری رکھیں گے، انصاراللہ ،حزب اللہ

طالبان کا ریڈ کراس کو محفوظ راستہ نہ دینے کا اعلان

ترک عوام اردغان کی شام مخالف پالیسی کے خلاف ہیں:سینئر ترک صحافی

افغانستان: مہدیؑ موعود شیعہ یونیورسٹی پر حملہ

یورپ ایران مخالف امریکی دباؤ کے سامنے سر نہیں جھکائے گا:جرمن وزیر خزانہ

2018-08-07 11:09:00

شوگر کے مریضوں کے لیے ’’نیم‘‘ کتنا فائدہ مند؟

32

عالمی ادارہ صحت (ڈیلبو ایچ او) کی رپورٹ کے مطابق عالمی سطح پر سالانہ تقریبا 16 لاکھ افراد شوگر کے باعث مرتے ہیں۔ ڈیلبو ایچ او نے دعوی کیا ہے کہ سال 2030 تک ذیابیطس کا شمار ساتویں جان لیوا بیماری میں کیا جائے گا۔ ذیابیطس ایک ایسی بیماری ہےجس میں خون کی شوگر مطلوبہ حد سے بڑھ جاتی ہے۔شوگر کے مریضوں کو دل کی بیماری، خون کی شریان کا مسئلہ، گردوں کا مرض، آنکھوں کی بیماری اور دماغی بیماری ہونے کا خدشہ ہوسکتا ہے اگر اس کا بر وقت علاج نہ کرایا جائے۔ اس کے علاوہ شعور کی کمی اور علاج میں کوتاہی بھی ذیابیطس کے علاج کو مشکل بنا دیتا ہےاو ر یہ تمام بیماریاں بھی ہوسکتی ہیں۔ شوگر کے مرض میں مبتلا افراد کے لیے میٹھی ڈششز، کولڈ ڈرنکز اور چکنائی والے کھانےزہر ہیں اسی لیے ڈاکٹر انہیں ان کھانوں سے پرہیز کی خاص تائید کرتے ہیں۔ شوگر کے مریضوں کو صحت مند رہنے کے لیے بے حد ضروری ہےکہ وہ اپنی ڈائٹ کا خیال رکھیں۔شوگر کے شکار افراد کے لیے کافی چیزیں ایسی ہیں جن کا استعمال نہ صرف ان کی بیماری کو دور کرے گا بلکہ انہیں تندرست اور چاک وچوبند بھی کردے گا جن میں ’میتھی دانہ، ایلو ویرا ،دار چینی، کریلا، نیم کے پتےاور دیگر جڑی بوٹیاں اور اجزاء شامل ہیں۔
’’نیم‘‘ کیا کرتا ہے؟
نیم ایک گرم پودا ہے جو کہ بھارت میں بڑے پیمانے پر پایا جاتا ہے۔ بھارتی اور چینی دوائوں کے طور پر نیم کا استعمال اس وقت سے کر رہے ہیں جب عالمی سطح پر کوئی نیم کے بارے میں ٹھیک سے جانتا بھی نہیں تھا۔ نیم کا درخت واحد ہے جس کےتقریبا تمام حصے روایتی طور پر مختلف علاج کے لیے استعمال کیےجاتے ہیں جن میں نیم کے پتے، پھول، بیچ، جڑیں اورچھال وغیرہ شامل ہے۔ نیم سے دور ہونے والی بیماریوں میں’ سوزش، انفیکشن، بخار، جلد کی بیماریاں، دانتوں کی خرابی اور دیگر بیماریاں شامل ہیں ۔ اس کے علاوہ نیم کا سب سے بڑا فائدہ ذیابیطس کے مریضوں کے خون میں شوگر کی لیول کو کم کرنا ہے۔ایک تحقیق سے یہ بات سامنے آئی ہے کہ نیم کے شربت کا روزانہ استعمال شوگر کے شکار افراد کے لیے بہت مفید ہے۔ لیکن اس بات کا خاص خیال رہے کہ حد سے زیادہ نیم کا استعمال صحت کے لیے خطرناک ثابت ہوسکتا ہے اور اگر نیم کا استعمال کرنے سے پہلے ڈاکٹر سے مشورہ کر لیا جائے تو بہتر ہے۔
نیم کا شربت بنانے کا طریقہ
شوگر کو کنٹرول کرنے کے لیے نیم کا شربت بے حدفائدہ مند ہےاور شربت بنانے کا طریقہ نہایت آسان ہے، سب سے پہلے نیم کے تقریبا 20 پتوں کو آدھے لیٹر پانی میں 5 منٹ تک اُبال لیں ۔ جب نیم کے پتے نرم ہونے لگیں اور پانی ہلکے سبزرنگ میں تبدیل ہونے لگے توپانی کو چولہے سے اتار لیں اور ٹھنڈا ہونے کے بعد اسے کسی بوتل میں ڈال کررکھ لیں اور دن میں کم سے کم دو مرتبہ اس پانی کو پیئیں،کچھ ہی دن میں واضح فرق نمایاں دکھائی دے گا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

زمرہ جات:   Horizontal 4 ، دنیا ،
دیگر ایجنسیوں سے (آراس‌اس ریدر)