سال 2018ء میں صہیونی زندانوں میں شہید ہونے والے فلسطینی!

یمن میں بچے سکولوں سے نکل کر مزدوری کرنے لگے

ڈونلڈ ٹرمپ اور کم جونگ اُن کی دوبارہ ملاقات آئندہ چند ہفتوں میں متوقع

شام: اسلحہ ڈپو پر بمباری سے 11 افراد ہلاک

وزیراعظم کی سی پیک کے تحت اقتصادی منصوبے تیز کرنے کی ہدایت

خطے میں ایران کا کردار مثبت اور تعمیری ہے: اقوام متحدہ

امریکی اتحادی جنگی طیاروں کی بمباری 20 جاں بحق

پرامن واپسی مارچ پر فائرنگ 43 فلسطینی زخمی

الحدیدہ پر سعودی اتحاد کے حملے میں یمنی شہریوں کا جانی نقصان

مغربی حلب میں شامی فوج نے دہشت گردوں کا حملہ پسپا کر دیا

گستاخانہ خاکوں کی روک تھام کا مطالبہ

امریکہ کی ایران مخالف تجویز پر اردن کی مخالفت

افغان مفاہمتی عمل پر مایوسی کے بادل منڈلانے لگے

ڈونلڈ ٹرمپ پر وکیل کو کانگریس سے جھوٹ بولنے کی ہدایات دینے کا الزام

راحیل شریف کو سعودی فوجی اتحاد کی سربراہی کیلئے این او سی جاری

پولیس کا مختلف علاقوں میں سرچ آپریشن، 10 ملزمان گرفتار، اسلحہ برآمد

پیراگون ہاؤسنگ اسکینڈل ، خواجہ برادران کو آج احتساب عدالت میں پیش کیا جائےگا

ملٹری کورٹس فوج کی خواہش نہیں، ملک کی ضرورت ہیں، ڈی جی آئی ایس پی آر

بھارت: صحافی کے قتل کے جرم میں مذہبی پیشوا کو عمر قید کی سزا

کسی کاباپ بھی پی ٹی آئی حکومت نہیں گراسکتا،فیصل واوڈا

ممتاز دفاعی تجزیہ کار اکرام سہگل کے الیکٹرک کے نئے چیئرمین مقرر

نواز شریف کا لابنگ کےلئے قومی خزانے کے استعمال کا انکشاف ، وزیراعظم عمران خان نے نوٹس لے لیا

فیس بک نے روس سے تعلق رکھنے والے سیکڑوں اکاؤنٹس اور پیجز بند کردیے

شام میں داخلے کے لئے سرحدی علاقوں میں عراقی فورسز چوکس/ امریکی داعش کے لئے جاسوسی کررہے ہیں!

’رزاق داؤدسےمجھے کوئی ذاتی مسئلہ نہیں‘

وزیراعظم کی سی پیک پر کام تیز کرنے کی ہدایت

سوڈان: روٹی کی قیمت پر احتجاج میں شدید، مزید دو افراد ہلاک

کولمبیا میں کار بم دھماکہ، 90 ہلاک و زخمی

ٹرمپ کے حکم پرانتخابات میں دھاندلی کرنے کا اعتراف

آسٹریلیا میں اسلاموفوبیا

برطانوی وزیر اعظم نئی مشکل سے دوچار

صوبائی خودمختاری برقرار رکھنے کی ضرورت ہے، جسٹس مقبول باقر

امریکہ کو ایران کا انتباہ

بحرین میں انسانی حقوق کی ابتر صورتحال

سعودی فوجی ٹھکانے پر میزائلی حملہ

بطورچیف جسٹس آصف سعید کھوسہ نے ایک گھنٹے کے اندر پہلے مقدمے کا فیصلہ سنادیا

جماعت اسلامی اور جمعیت علما اسلام نے افغان طالبان کے ساتھ مذاکرات کو خوش آئند قرار دے دیا

’’سندھ حکومت نہیں گرا رہے، خود گرنے والی ہے‘‘

کراچی میں پانی و سیوریج لائنیں ٹوٹنے پر سعید غنی برہم

کسی کو صوبوں کا حق چھیننے نہیں دیں گے، چیئرمین پیپلز پارٹی

پریس ٹی وی کی اینکر کی عالمی سطح پررہائی کا مطالبہ

اقوام متحدہ کے خصوصی ایلچی کی شامی وزیر خارجہ سے ملاقات

جسٹس آصف سعید کھوسہ نے 26ویں چیف جسٹس کے عہدے کا حلف اٹھالیا

آسٹریلین اوپن، جوکووچ نے تیسرے راؤنڈ میں جگہ بنالی

زلمے خلیل زاد کی وزیر خارجہ سے ملاقات

پیغام پاکستان۔۔۔۔۔ ابھی بہت کچھ کرنا باقی ہے

’ہمارے اراکین پارلیمنٹ ای سی ایل میں نام آنے سے خوفزدہ کیوں؟‘

کراچی: رینجرز نے ڈکیتی کی کوشش ناکام بنادی

اماراتی فضائی کمپنی کا شام کےلیے فلائیٹ آپریشن بحال کرنے کا اشارہ

عمران خان 5 نہیں 10 سال نکالیں گے، سینیٹر فیصل جاوید

وزیراعظم کے ٹوئٹ پر مخالفت کرنےوالوں کووزیراطلاعات کاکراراجواب

وزیر اعلیٰ سندھ تعاون کریں تو زیادہ نوکریاں دے سکتا ہوں: آصف زرداری

مسجد الاقصی کے دفاع کا عزم

فرانس: یونیورسٹی کی عمارت میں دھماکا، 3 افراد زخمی

نیب میں موجود انگنت کیسز فیصلوں کے منتظر

اسرائیل میں سیکس کے بدلے جج بنانے کا سکینڈل

کانگو میں فسادات 890 افراد ہلاک

ایران مخالف اجلاس میں شرکت کرنے سے موگرینی کا انکار

عالمی شہرت یافتہ باکسر محمد علی آج بھی مداحوں کے دلوں میں زندہ ہیں

آخری دم تک انصاف کے لیے لڑوں گا، جسٹس آصف کھوسہ

سپرپاور بننے کا امریکی خواب چکنا چور : جواد ظریف

ایران کی سائنسی ترقی کا سفر جاری رہے گا: بہرام قاسمی

مون سون کی بارشوں کا سلسلہ جاری : ندی نالوں میں طغیانی

یمن میں عالمی مبصرین کی تعیناتی کی منظوری

سعودی عرب کی مہربانی عمرہ زائرین پرایک اور ٹیکس عائد

شام میں 4 امریکی فوجیوں سمیت متعدد افراد ہلاک

کچھ ارکان اسمبلی ای سی ایل سےاتنے خوفزدہ کیوں ہیں؟وزیراعظم عمران خان کا سوال

گلگت بلتستان اورآزاد کشمیرکی موجودہ حیثیت میں کوئی تبدیلی نہیں ہوگی‘ سپریم کورٹ

سپریم کورٹ: شیخ زید ہسپتال کا انتظام وفاقی حکومت کے حوالے کرنے کا حکم

چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کا عدالت میں آخری روز، اعزاز میں فل کورٹ ریفرنس

امریکی صدرکےنمائندہ خصوصی زلمےخلیل زاد پاکستان پہنچ گئے

2019-01-03 10:48:04

سال 2018ء میں صہیونی زندانوں میں شہید ہونے والے فلسطینی!

36

فلسطین میں انسانی حقوق کی تنظیموں کی رپورٹس کے مطابق 2018ء کے دوران اسرائیلی زندانوں میں‌پابند سلاسل 5 فلسطینی شہید ہوگئے جس کے بعد صہیونی زندانوں میں شہید ہونے والے فلسطینیں کی تعداد 217 تک جا پہنچی ہے۔

فلسطینی اسیران و فالوپ مرکز کی رپورٹ کے مطابق اسرائیلی عقوبت خانوں میں صہیونی جلادوں کے انسانیت سوز تشدد کے باعث زندگی کی باز ہارجانے والوں کی تعداد میں مزید اضافہ ہوا ہے اور مزید پانچ فلسطینی گذشتہ برس جیلوں میں زندگی کی بازی ہارگئے۔

عمر السرادیح
صہیونی عقوبت خانوں میں دوران حراست شہید ہونے والوں میں اریحا شہر کے 33 سالہ یاسین عمر السرادیح پہلے فلسطینی اسیر ہیں جو گذشتہ برس دشمن کی جیل میں جام شہادت نوش کرگئے۔ ان کی شہادت کا واقعہ 22 فروری کو پیش آیا۔ صہیونی فوجیوں‌نے السرادیح کو انتہائی قریب سے گولیاں مار کر زخمی کرنے کے بعد حراست میں لیا اوران پر ہولناک تشدد کیا گیا۔ گرفتاری کے صرف چار گھنٹے کے بعد السرادیح دم توڑ گئے تھے۔

محمد صبحی عنبر
گذشتہ برس صہونی عقوبت خانوں میں شہید ہونے والے دوسرے فلسطینی 46 سالہ محمد صبحی عنبر ہیں۔ ان کا تعلق غرب اردن کے شمالی شہر طولکرم کے ایک پناہ گزین کیمپ سے تھا۔ انہیں دوران حراست انسانیت سوز اذیتوں کا نشانہ بنایا۔ صبحی عنبر کو بھی فائرنگ کرکے زخمی حالت میں گرفتار کیا گیا اور اسے چھ روز تک مسلسل حراست میں رکھا گیا۔ تشدد کے نتیجے میں حالت بگڑنے پر عنبرکو “مائیر” نامی اسپتال منتقل کیا گیا جہاں وہ چند روز زیرعلاج رہنے کے بعد دم توڑ گئے۔

عبدالکریم مرشود
غرب اردن کے شمالی شہر طولکرم کے بلاطہ پناہ گزین کیمپ کے رہائشی 30 سالہ محمد عبدالکریم مرشود 9 اپریل کو صہیونی عقوبت خانے میں جام شہادت نوش کرگئے۔ عبدالکریم مرشود کو اسرائیلی فوج نے بیت المقدس میں الخان الاحمر میں احتجاج کے دوران گولیاں مار کر شدید زخمی کرنے کے بعد حراست میں لے لیا تھا۔ صہیونی فوج نے اس پر یہودی آباد کاروں پر چاقو سےحملے کا الزام عاید کیا گیا۔ دوران حراست انسانیت سوز تشدد کا نشانہ بنا کر اسے شہید کردیا۔

عزیز عویسات
بیس مئی 2018ء کو عزیز موسیٰ عویسات کو اسرائیلی فوج نے وحشیانہ تشدد کرکے شہید کیا۔ 53 سالہ عزیز عویسات کو ‘ایچل’ نامی زندان میں ہولناک تشدد کا نشانہ بنایا جاتا رہا۔ انہیں کئی روز تک کئی کئی صہیونی جلاد تشدد کا نشانہ بناتے۔ عویسات پہلے ہی گردوں سمیت کئی دوسرے خطرناک امراض کا بھی شکار تھے۔ وحشیانہ تشدد کے باعث دل کا دورہ پڑنے کے بعد انہیں اسپتال منتقل کیا گیا مگر وہ جاں برنہ ہوسکے اور جام شہادت نوش کرگئے۔ عویسات کو 30 سال قید کی سزا سنائی گئی تھی جس میں سے وہ 4 سال قید کاٹ چکے تھے۔

محمد زغلول الریماوی
چویس سالہ محمد زغلول الریمای پانچویں فلسطینی ہیں جنہیں گذشتہ برس صہیونی زندانوں میں انسانیت سوز تشدد کرکے شہید کردیا گیا۔ زغلول الریماوی کو اسرائیلی فوج نے “حلمیش” یہودی کالونی کے قریب سے حراست میں لیا اور اس کے بعد موقع پر ہی وحشیانہ تشدد کرکے ایک خفیہ مقام پر منتقل کردیاگیا۔ دوران حراست اس پر مزید تشدد کیا گیا اور وہ 18 ستمبر 2018ء کو گرفتاری کے محض دو گھنٹے کے بعد جام شہادت نوش کرگئے۔

انسانی حقوق کی تنظیم کے مطابق سال 2018ء کے دوران 5700 فلسطینیوں کو حراست میں لیا گیا جن میں 980 بچے اور 175 خواتین بھی شامل ہیں۔

زمرہ جات:   Horizontal 5 ، مشرق وسطیٰ ،
دیگر ایجنسیوں سے (آراس‌اس ریدر)

تبدیلی تو آئی ہے!

- ایکسپریس نیوز